نابالغ دلت لڑکی کو 10 رکشہ ڈرائیورز نے پکڑ لیا اور پھر6 مہینے تک ۔۔۔ پڑوسی ملک سے شرمناک خبر آگئی

نابالغ دلت لڑکی کو 10 رکشہ ڈرائیورز نے پکڑ لیا اور پھر6 مہینے تک ۔۔۔ پڑوسی ملک ...
نابالغ دلت لڑکی کو 10 رکشہ ڈرائیورز نے پکڑ لیا اور پھر6 مہینے تک ۔۔۔ پڑوسی ملک سے شرمناک خبر آگئی

  



ممبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست مہاراشٹر کے ضلع سولا پور میں 10 لوگ مسلسل 6 ماہ تک ایک 16 سالہ دلت لڑکی کے ساتھ اجتماعی زیادتی کرتے رہے۔ پولیس نے 5 ملزمان کو گرفتار کرکے ان کے خلاف اجتماعی زیادتی، پوکسو ایکٹ اور ذات پات کے قانون کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کرلیا ہے۔

واقعہ اس وقت منظر عام پر آیا جب لوگوں نے 16 سالہ لڑکی کو مندر کے باہر روتے ہوئے دیکھا ، لوگوں نے فوری طور پر پولیس کو اطلاع کردی۔ پولیس کے ایک افسر نے بتایا کہ لڑکی بہت ہی ڈری ہوئی تھی لیکن جب پولیس نے اسے اعتماد میں لیا تو اس نے خود کے ساتھ پیش آنے والا سارا واقعہ بیان کیا، پولیس نے فوری طور پر مقدمہ درج کرتے ہوئے 10 میں سے 5 ملزمان کو گرفتار کرلیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ملزمان میں سے اکثریت رکشہ ڈرائیورز ہیں جو لڑکی کو ایک جگہ سے دوسری جگہ لے جاتے اور اس کے ساتھ زیادتی کرتے رہے، لڑکی کے والد کا کچھ عرصہ پہلے انتقال ہوگیا تھا اور وہ اپنی ماں کے ساتھ رہتی تھی جو گزر بسر کیلئے چھوٹے موٹے کام کرتی تھی۔

مزید : جرم و انصاف