نوٹو ں، لوٹوں اور جھو ٹوں کی سیاست ختم ہونی چاہئے: سراج الحق 

نوٹو ں، لوٹوں اور جھو ٹوں کی سیاست ختم ہونی چاہئے: سراج الحق 

  

لاہور (نمائندہ خصوصی)امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ اراکین اسمبلی کے ویڈیو سکینڈل کے بعد سب سے اہم سوال یہ کھڑا ہو گیاہے کہ جو لوگ خود بک جاتے ہیں، وہ عوام کے حقوق کا تحفظ کیسے کریں گے۔ جماعت اسلامی کا شروع دن سے موقف ہے کہ نوٹوں، لوٹوں، بوٹوں اور جھوٹوں کی سیاست ختم ہونی چاہیے۔ بارہا کہہ چکاہوں کہ پی ٹی آئی اور پی ڈی ایم کی سیاست میں کوئی فرق نہیں۔ پی ٹی آئی کے دور میں بھی اراکین اسمبلی کی خرید و فروخت کا وہی کلچر جاری ہے جو پی پی، نون لیگ کے دور میں ہوتا رہا۔ ہم سمجھتے ہیں کہ تینوں پارٹیوں کی سیاست میں فرق سمجھنا دانشمندی نہیں۔اگر وزیراعظم یوٹرن لیتے ہیں تو پی ڈی ایم نے بھی استعفوں اور سینیٹ الیکشن سے متعلق اعلانات پر وہی کیاہے۔ پھر کہتاہوں کہ ظالم جاگیردار اور کرپٹ سرمایہ دار طبقہ صرف لوٹ اور جھوٹ کے زور پر قوم پر مسلط ہے۔ ملک کا نظریاتی تشخص خطرے میں ہے۔ معاشرے کی بنیادی اکائی ”خاندان“ کو تباہ کرنے کی سازشیں ہورہی ہیں۔جماعت اسلامی 11 فروری سے 11 مارچ تک پورے ملک میں بھر پور طریقے سے ”استحکام خاندان“مہم چلائے گی۔ خواتین کو وراثت میں حق ملناچاہیے۔ جہیز کی لعنت سے چھٹکارا چاہتے ہیں۔ ریاست خواتین کو ورک پلیس پر تحفظ فراہم کرنے کے قوانین کا اطلاق کروائے۔ جماعت اسلامی 14 فروری کو ملک بھر میں یوم حیا منائے گی۔ ویلنٹائن ڈے کا کلچر اسلامی تہذیب و تمدن پر حملہ ہے، نوجوان نسل اس کا بائیکاٹ کرے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے منصورہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔ سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی امیر العظیم، نائب امیر راشد نسیم اور سیکرٹری اطلاعات قیصر شریف بھی اس موقع پر موجود تھے۔ لاہور(نمائندہ خصوصی)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے سری لنکا حکومت کے اس فیصلے کا خیر مقدم کیاہے کہ کووڈ19 سے متاثرہ سری لنکن مسلمان فوت شدگان کو اسلامی طریقے سے دفن کیا جائے گا۔ جماعت اسلامی کے امور خارجہ کے مطابق پاکستان میں تعینات سری لنکن سفیر عزت مآب وائس ایڈمرل موہن وکرم کے نام اپنے خط میں سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ سری لنکا اور پاکستان کے عوام دوستی کے پائیدار رشتوں میں منسلک ہیں اور امید ہے کہ آئندہ دور خیر سگالی کے نئے باب کھول دے گا۔

سراج الحق

مزید :

پشاورصفحہ آخر -