ملاوٹی دودھ فروخت کرنیوالا گروہ پکڑا گیا‘ہزاروں لیٹر تلف 

ملاوٹی دودھ فروخت کرنیوالا گروہ پکڑا گیا‘ہزاروں لیٹر تلف 

  

ڈیرہ غازیخان (سٹی رپورٹر) پنجاب فوڈ اتھارٹی نے ملاوٹی دودھ فروخت کرنے والا سرغنہ گروہ پکڑ لیا۔ناکہ بندی کے دوران دودھ بردار گاڑیوں کی چیکنگ،4ہزار لٹر ملاوٹی دودھ تلف،قوانین کی خلاف ورزیوں پرمتعدد فوڈ پوائنٹس کو 1لاکھ 26 ہزارروپے کے جرمانے عائد، 152شاپس مالکان کو وارننگ نوٹسز جاری۔ تفصیلات کے مطابق ڈائریکٹر (بقیہ نمبر45صفحہ 6پر)

جنرل پنجاب فوڈاتھارٹی رفاقت علی نسوآنہ کی ہدایت پر فوڈ سیفٹی ٹیموں کے ڈی جی خان اور بہاولپور ڈویژن کے مختلف اضلاع میں ملاوٹ مافیا کے خلاف گرینڈ آپریشنزجاری ہیں۔ فوڈ سیفٹی ٹیموں نے 189 فوڈ یونٹس کی چیکنگ کے دوران قوانین کی خلاف ورزی پر 2 فوڈ یونٹس سیل جبکہ 152 شاپس مالکان کو بہتری نوٹسز جاری کیے۔ ڈیری سیفٹی ٹیم نے مظفرگڑھ میں قریشی چوک پر دودھ بردار گاڑیوں کو چیک کیا۔ گاڑی نمبر ایم این ایس 2019 اور کے ایم 3235 میں موجود دودھ کے معیار کو چیک کیا گیا۔ سی ڈی آر ٹیسٹ کے دوران دودھ میں پانی اور ڈیٹرجنٹس کی ملاوٹ پائی گئی۔ دودھ میں ٹھوس پن اور غذائیت کی کمی پائی گئی۔ ملاوٹ ثابت ہونے پر دونوں گاڑیوں میں موجود 4 ہزار لٹرمضر صحت دودھ تلف کردیا گیا۔اس کے علاوہ بہاولپور میں نگار نیو لقمان تکہ شاپ اینڈ ریسٹورنٹ کو پروڈکشن ایریا میں واش روم، مکڑیوں کے جالے ہونے اور خوراک کو فرش پر سٹور کرنے جبکہ رحیم یارخان میں ثانی لاثانی کریانہ سٹور کو سرخ مرچوں میں رنگ کی ملاوٹ ثابت ہونے پر سیل کیاگیا۔ دوران کارروائی 40 کلو ملاوٹی سرخ مرچیں برآمد کرلی گئیں۔ علاوہ ازیں ڈی جی خان میں عوامی کریانہ اینڈ سپر سٹور کو ایکسپائرڈ فوڈ آئٹمز فروخت کرنے، ملک عابد کریانہ سٹور کو کھلے ملاوٹی مصالحہ جات فروخت کرنے، لیہ میں مدنی بیکرز پروڈکشن یونٹ کو خوراک کو ڈھانپ کر نہ رکھنے، مظفرگڑھ میں نوید کریانہ سٹور کو کھلے مصالحے فروخت کرنے اور پاکستان بیکری کو ایکسپائرڈ بسکٹس اور نمکو فروخت کرنے پر 10،10روپے کے جرمانے عائد کیے گئے۔ مجموعی طور پر کی گئی کارروائیوں کے دوران 50 کلو غیر معیاری خوراک تلف جبکہ 40کلو ملاوٹی سرخ مرچیں برآمد کرلی گئیں۔

تلف

مزید :

ملتان صفحہ آخر -