کے ٹو پر کوہ پیماؤں کی تلاش ،ملکی تاریخ کا سب سے بڑا آپریشن شروع

کے ٹو پر کوہ پیماؤں کی تلاش ،ملکی تاریخ کا سب سے بڑا آپریشن شروع
کے ٹو پر کوہ پیماؤں کی تلاش ،ملکی تاریخ کا سب سے بڑا آپریشن شروع

  

سکردو(ڈیلی پاکستان آن لائن)سات روز سے لاپتہ پاکستانی کوہ پیما محمد علی سدپارہ ،جان اسنوری اور جے پی موہر کی تلاش کے لیے ملکی تاریخ کا سب سے بڑا ریسکیو آپریشن شروع کردیا گیا ہے۔

سما نیوز کے مطابق  آپریشن میں پاک فضائیہ کا سی 130 طیارہ استعمال کیا جا رہا ہے۔ سی 130 میں لگے انفرا ریڈ کیمرے سے لیے گئے خاکوں کو  تصاویر میں تبدیل کیا جائے گا، جس سے علاقے میں موجود چیزوں  کی نشاندہی ہوسکے گی۔طیارے میں نصب ہائی ریزولیشن کیمرے سے فٹبال کے برابر پڑی چیز بھی واضح نظر آسکے گی۔تصاویر سامنے آنے کے بعد  کوہ پیما گراؤنڈ آپریشن کریں گے اور مارک کی گئی  جگہ کا معائنہ کریں گے۔

گزشتہ روز جاری سیٹلائٹ تصاویر سے علی سد پارہ کے ممکنہ آخری مقام کی نشاندہی ہوئی تھی۔ جاری کی گئی تصویروں میں بکھرا ہوا سامان نظر آرہا تھا، تاہم اس بات کی تصدیق نہیں ہوسکی کہ یہ سامان کس کا تھا۔

واضح رہے کہ محمد علی سد پارہ سمیت دیگر کوہ پیماؤں کا جمعہ پانچ  فروری کو کیمپ سے رابطہ منقطع ہوا، جس کے بعد ہیلی کاپٹر کے ذریعے کوہ پیما ٹیم کی تلاش کا مشن شروع کیا گیا، تاہم سخت موسم کی وجہ سے کامیابی نہ ملی۔کوہ پیماؤں کا آخری مرتبہ رابطہ 8200 میٹر بلندی پر بوٹل نک سے ہوا تھا۔ موسم سرما میں دنیا کی دوسری بلند ترین چوٹی کے ٹو کو سرچ کرنے کی مہم پر روانہ کوہ پیماؤں کو لاپتا ہوئے آج سات روز گزر گئے ہیں۔

مزید :

قومی -