حکومتی پالیسیاں عوام کیلئے معاشی قتل گاہ بن چکی ہیں،ذکر اللہ مجاہد

حکومتی پالیسیاں عوام کیلئے معاشی قتل گاہ بن چکی ہیں،ذکر اللہ مجاہد

  

  لاہور(پ ر)امیر جماعت اسلامی لاہور میاں ذکر اللہ مجاہد نے کہا ہے کہ نااہل حکومت کی پالیسیاں عوام کیلئے معاشی قتل گاہ بن چکی ہیں۔ بجلی، پٹرول، گیس، ادویات سمیت دیگر اشیاء  پر فیول ایڈجسٹمنٹ کے نام پر ہر ماہ عوام کی جیبوں پر اربوں روپے کا ڈاکہ ڈالا جارہا ہے۔ کمر توڑ مہنگائی اور بے روزگاری کے ہاتھوں پریشان عوام صحت جیسی بنیادی سہولت سے بھی محروم سرکاری ہسپتالوں میں در در کی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہے۔ نااہل حکمرانوں نے ادویات قیمتوں میں بھی 400 فیصد سے زائد اضافہ کردیا  ان خیالات کا اظہار انہوں نے ثریاعظیم ہسپتال کی مینجمنٹ کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں سیکرٹری گورننگ باڈی ثریا عظیم ہسپتال افتخار احمد چوہدری، ایم ایس ہسپتال ڈاکٹر محمود اختر رانا، ممبر گورننگ باڈی ثریا عظیم ہسپتال عبدالعزیز عابد، مارکیٹنگ، عبداللہ حارس سمیت دیگر ڈاکٹر صاحبان اور مینجمنٹ ممبران ہسپتال نے شرکت کی۔

 میاں ذکر اللہ مجاہد نے مزیدکہا کہ ہیلتھ انشورنس کے نام پر قومی خزانے پر اربوں اور کھربوں کا بوجھ ڈالا گیا ہے۔تحریک انصاف کے نام نہاد صحت کارڈ پرمخصوص شرائط کیساتھ علاج معالجہ کی سہولیات عوام کیلئے ناکافی ہیں۔ حکومت کے صحت کارڈ پرجب تک مریض ہسپتال میں داخل نہیں ہوگا اس کا علاج نہیں کیا جائے اور سرکاری ہسپتالوں میں مریض کو اس وقت تک داخل نہیں کیا جاتا جب تک مریض اللہ کو پیارا ہونے کے قریب نہیں پہنچ جاتا اور پرائیویٹ ہسپتالوں میں مریض کو داخل کیا ہی نہیں جاتا۔اکا دوکا  ہسپتال ثریا عظیم ہسپتال سمیت صحت کارڈ پر عوام کو علاج معالجہ کی سہولیات فراہم کررہیہیں۔ امیر لاہور نے کہا کہ  ثریاعظیم ہسپتال عام آدمی اور متوسط طبقہ کے لوگوں کیلئے کسی نعمت سے کم نہیں ہے جہاں مستحق افراد کا منظم اور باعزت طریقہ کار کے ذریعے مفت علاج معالجہ کی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں جبکہ ثریاعظیم ہسپتال شہر کے دیگر پرائیویٹ ہسپتالوں کی نسبت انتہائی کم ریٹ پر شہریوں کو صحت کی معیاری سہولیات فراہم کررہا ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -