بازیابی کیس، ایس ایس پی آپریشنز  کو معاملہ کی انکوائری کرکے  رپورٹ پیش کرنے کا حکم 

بازیابی کیس، ایس ایس پی آپریشنز  کو معاملہ کی انکوائری کرکے  رپورٹ پیش کرنے ...

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ کے مسٹرجسٹس طارق سلیم شیخ نے لیسکو افسروں کی حراست سے 14 سالہ نوجوان کی بازیابی کے کیس میں ایس ایس پی آپریشنز کو معاملہ کی انکوائری کرکے آئندہ سماعت پر رپورٹ عدالت میں پیش کرنے کا حکم دے دیا درخواست گزارمحمد رمضان کی درخواست پر سماعت شروع ہوئی تو عدالتی حکم پر ایس ایس پی آپریشنز نے درخواست گزار کے بیٹے محمد اسد کو بازیاب کرکے عدالت پیش کردیا،فاضل جج نے ایس ایس پی کومخاطب کرتے ہوئے کہا کہ جو کام ہمارا ہے وہ آپ کا بھی ہے، شہریوں کے حقوق کا تحفظ کرنا ہے، فاضل جج نے استفسار کیا کہ بچہ کہاں سے ملا؟ ایس ایس پی نے کہا کہ بچہ کاہنہ کے علاقے کی ایک گراؤنڈ سے ملا ہے، فاضل جج نے کہا کل لیسکو افسران کو بلوایا تھا جس کے بعد کسی نے بچے کو چھوڑ دیا ہوگا، بچے کا باپ بوڑھا شخص ہے، معاملہ انکوائری طلب ہے، آپ معاملے کی انکوائری کروا کر رپورٹ پیش کریں، معاملے کی انکوائری کریں کسی کے ساتھ ظلم نہیں ہونا چاہیے، درخواست گزار کا موقف تھا کہ میرا بیٹا محمد اسد کزن یاسمین کے پاس ریائش پذیر ہے، یاسمین نے لیسکو افسران کے خلاف دعوی کررکھا ہے، ایس ڈی او گلشن راوی  اور ایکسیئن سبزاہ زار کے ایما ء پر درخواست گزار کے بیٹے کو اغواء کیا گیا، عدالت سے استدعاہے کہ درخواست گزار کے بیٹے کو بازیاب کرنے کا حکم دیاجائے۔

بازیابی کیس

مزید :

صفحہ آخر -