احتساب کا کلہاڑا ضرور چلے گا،انصاف ہوکر رہے گا، حسان خاور

احتساب کا کلہاڑا ضرور چلے گا،انصاف ہوکر رہے گا، حسان خاور

  

لاہور (لیڈی رپورٹر،آئی این پی)ترجمان پنجاب حکومت حسان خاور نے کہا ہے کہ تاریخ پر تاریخ لیتے رہیں لیکن انصاف اور احتساب ہوکررہے گا‘سیاستدانوں کے چپڑاسیوں کے اکاؤنٹس سے 400 کروڑ نکلیں اور وہ اس کا جواب دینے کے بجائے بڑی بڑی تقریریں کریں،مقصود چپڑاسی اور مسرور انور ان کی کرپشن کی کتاب کا سیاہ باب ہیں۔پاکستان اور عمران خان اس کرپشن کا حساب لے کر رہیں گے۔ حسان خاور نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں کہا کہ حمزہ شہباز کہتے ہیں میں نے وکیل بدلنا ہے اس لیے کیس میں التواء دیں جبکہ شہباز شریف کہتے ہیں لمبا التواء دیں کیونکہ قومی اسمبلی کا اجلاس آرہا ہے۔ منی لانڈرنگ کیس میں شہباز شریف اور حمزہ شہباز کا بہانے بہانے سے تاریخیں لینا ثابت کرتا ہے کہ دال میں کچھ کالا نہیں بلکہ ساری دال کالی ہے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں حسان خاور نے کہا کہ بکرے کی ماں کب تک خیر منائے گی آخر احتساب کا کلہاڑا ان پر ضرور چلے گا۔دوسری جانب حسان خاور نے کہا ہے کہ صحافیوں کو واقعات اور معاملات کی پورٹنگ میں توازن برقرار رکھنا چاہیے۔ وہ پنجاب یونیورسٹی انسٹی ٹیوٹ آف کوالٹی اینڈ ٹیکنالوجی مینجمنٹ کے آڈیٹوریم میں منعقدہ ڈاکٹورل سپرنگ سکول کی اختتامی تقریب سے خطاب کر رہے تھے۔ اپنے خطاب میں حسان خاور نے کہا کہ بین الاقوامی و قومی میڈیا میں بہت سی تبدیلیاں رونما ہوچکی ہیں خاص طور پر کوڈ 19 میں ڈیٹا جرنلزم کی اہمیت اجاگر ہوئی ہے اور ہم گواہ ہیں جیسے جعلی خبروں نے قیمتی جانوں کو نقصان پہنچایا۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے یہ بھی دیکھا کہ میڈیا کس طرح معاشرے میں مشعل کا کردار ادا کرتے ہوئے عوام کو مخصوص سمت کی طرف لے جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میڈیا کے ایکو سسٹم کو معاشرے کی خدمت کرنی چاہیے۔انہوں نے نجی میڈیا سے منسلک رپورٹرز کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ یہ سمجھنا مشکل ہے کہ کیسے ایک پرائیویٹ ادارے کا ایک رپورٹر سرکاری اداروں کے تقریباً 20نمائندوں کے برابر کام کرتا ہے۔ 

 حسان خاور

مزید :

صفحہ اول -