اقتصادی راہداری منصوبہ، مقامی سرمایہ کار نئی سرمایہ کاری ، پیداوار میں اضافے کے اقدامات میں مصروف

اقتصادی راہداری منصوبہ، مقامی سرمایہ کار نئی سرمایہ کاری ، پیداوار میں ...

  

اسلام آباد (اے پی پی) چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے ( سی پیک) کے باعث نہ صرف غیر ملکی سرمایہ کار متوجہ ہورہے ہیں بلکہ سے مقامی سرمایہ کار بھی نئی سرمایہ کاری کرنے اور اپنی پیداوار میں اضافے کیلئے اقدامات کررہے ہیں۔ ملک کی بڑی صنعتی وکاروباری گروپ اپنی پیداوار میں اضافے کیلئے کام کررہے ہیں جن میں سیمنٹ ، سٹیل، بجلی کی تاریں اور شیشہ سازی کی صنعتوں سمیت دیگر کئی صنعتیں بھی شامل ہیں۔ اقتصادی وصنعتی ماہرین نے کہاہے کہ سی پیک کے آغاز اور چینی صدر ژی جن پنگ کے دورہ پاکستان ک�آصرف نو ماہ کے قلیل عرصہ میں ملک کی صنعتی وتجارتی سرگرمیوں میں نمایاں بہتری آئی ہے اور آنے والے چند ماہ کے دوران ان میں مزید اضافہ ہوگا جس سے ملکی معیشت کے پھیلاؤ میں اضافہ ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری کے منصوبے کے تناظر میں بڑا صنعتی گروپ نشاط گروپ بلوچستان میں سیمنٹ کا نیا کارخانہ قائم کررہا ہے جبکہ لکی سیمنٹ پنجاب میں فیکٹری قائم کررہا ہے۔ اسی طرح لکی سیمنٹ کی جانب سے کراچی میں بجلی گھر کی تعمیر کا کام بھی جاری ہے اور کراچی میں واقع ایک سٹیل مل اپنی پیداواری صلاحیتوں میں اضافہ کیلئے اقدامات کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حال ہی میں لاہور میں قائم فاسٹ کیبلز بجلی کی تاروں کی پیداوار میں اضافہ کرنا چاہتی ہے۔ ماہرین نے کہا کہ مقامی سرمایہ کاروں کی جانب سے کی جانے والی نئی سرمایہ کاری چین پاکستان اقتصادی راہداری کے منصوبے کے گرد گھومتی ہے جبکہ غیر ملکی سرمایہ کاروں کی کثیر تعداد بھی مختلف شعبوں اور بالخصوص اقتصادی راہداری کے منصوبے سے جڑے بعض شعبوں میں سرمایہ کاری میں دلچسپی لے رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اقتصادی راہداری کا منصوبہ نہ صرف خطے کی اقتصادی سرگرمیوں کے فروغ کا سبب بنے گا بلکہ اس سے ملک مین بھی کاروباری ، تجارتی وصنعتی سرگرمیوں میں اضافہ اور ملکی معیشت مستحکم ہوگی۔

مزید :

کامرس -