رواں سال بڑے سیاسی جھٹکے آنے والے ہیں،منظور حسین وسان

رواں سال بڑے سیاسی جھٹکے آنے والے ہیں،منظور حسین وسان

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سندھ کے وزیر برائے معدنیات منظور حسین وسان نے کہا ہے کہ رواں سال بڑے سیاسی جھٹکے آنے والے ہیں، میرا خواب کہتا ہے کہ سندھ اور وفاق میں بڑی تبدیلیاں آئیں گی، مارچ میں کسی نہ کسی کو قربانی دینی ہوگی، سندھ گرینڈ الائنس بنے یا پنجاب گرینڈ الائنس ،پیپلز پارٹی کو کچھ نہیں ہونے والا ، گرینڈ الائنس سے اگر پیپلز پارٹی کو کچھ ہوتا تو آج پیپلز پارٹی نہیں ہوتی۔ یہ گرینڈ الائنس سندھ میں کئی مرتبہ بنے ہیں، پیر صاحب پگارا سندھ کا مفاد چاہتے ہیں تو ہم بھی سندھی ہیں، شہید ذوالفقار علی بھٹو بھی سندھی تھے ،پیر پگارا سندھ گرینڈ الائنس میں شامل ہوکر اپنی اہمیت بڑھانے کی کوشش کررہے ہیں۔ایک انٹرویومیں انہوں نے کہا کہ میاں صاحباں اپنی غلطیوں سے اپنا تخت الٹا کردیں تو الگ بات ہے ، لیکن ہم چاہتے ہیں کہ جمہوریت جاری و ساری رہے ، مخالفین یہ نہ سوچیں کہ پیپلز پارٹی اب ختم ہوچکی ہے ، آصف علی زرداری کے پاس شطرنج کی کئی چالیں ابھی باقی ہیں، آصف علی زرداری پاکستانی ہیں ،وہ کیوں نہیں پاکستان آئیں گے ، وہ کسی بھی وقت اپنے ملک آسکتے ہیں، ہم کوئی بھگوڑے نہیں جو اپنے ملک اور پارٹی کارکنوں کو تنہا چھوڑ کر باہر جاکر بیٹھ جائیں، یہ پارٹی شہیدوں کی پارٹی ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگر وفاق رینجرز کے مسئلے کو اتنا بڑھاچڑھاکر پیش کرے گا تو یہ سندھ کے ساتھ ظلم و زیادتی ہوگی، ہم بھی کسی سے نہیں ڈرنے والے نہیں، ہمیں دھمکیاں دینے والے بھی ہم سے بچ نہیں سکتے ۔انہوں نے کہا کہ مخالفین پیچھے سے دشمن کی طرح وار کرتے ہیں، ہم عوام کے ساتھ ملکر سیاسی وار کرتے ہیں دشمنی نہیں کرتے ۔منظور حسین وسان نے کہاکہ بلاول بھٹو کی سیاست میں آمد نے مخالفین کی نیندیں اڑا دی ہیں، عمران خان اور میاں برادران کا آنے والے 2018 کے الیکشن میں پتا چلے گا، ابھی تو وہ صرف میڈیا پر آکر اور جلسے کرکے سیاست کر رہے ہیں،سیاست میں اگر جلسے کرکے جیتا جاتا تو آج طاہرالقادری ملک کے لیڈر ہوتے لیکن سیاست کوئی کھیل نہیں، شہید ذوالفقار بھٹو اور شہید محترمہ بے نظیر بھٹو کی سیاست کو امریکا نے بھی تسلیم کیا ہے ۔شہید محترمہ بینظیر بھٹو آکسفورڈ یونیورسٹی میں لیکچر دیتی تھیں، بھٹو خاندان یونیورسٹی کا درجہ رکھتا ہے ۔

مزید :

کراچی صفحہ آخر -