حکومت تجارتی خسارہ میں کمی کیلئے فوری اقدامات کرے، ٹریڈرز رائٹس فورم

حکومت تجارتی خسارہ میں کمی کیلئے فوری اقدامات کرے، ٹریڈرز رائٹس فورم

لاہور (کامرس رپورٹر)لاہور ٹریڈرز رائٹس فورم کے سینئر وائس چےئرمین و لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کی سٹینڈنگ کمیٹی برائے کیمیکل امپورٹرز اینڈ ٹریڈ کے کنوینر راؤ خورشید علی نے کہا ہے کہ حکومت تجارتی خسارہ میں کمی کیلئے فوری اقدامات کرے۔ برآمدات میں اضافہ کئے بغیر تجارتی خسارہ میں کمی ممکن نہیں ،پچھلے 6 ماہ کے دوران تجارتی خسارہ 17 ارب 96 کروڑ روپے سے تجاوز کرجانا حکومت اور پالیسی سازوں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے جبکہ دوسری جانب برآمد کنندگان کو ریفنڈز کی رقم نہ ملنے کی وجہ سے ایکسپورٹ کا شعبہ بری طرح متاثر ہو رہاہے جس کے منفی اثرات ملکی معیشت پرمرتب ہو رہے ہیں ۔ یہ بات انہوں نے گزشتہ روز تاجروں کے ایک اجلاس کے دوران خطاب کرتے ہوئے کہی۔ راؤ خورشید علی نے کہا کہ حکومت کی جانب سے غیر ملکی قرضوں کی ادائیگیوں کے باعث ملکی زرمبادلہ کے ذخائر شدید دباؤ کا شکار ہیں جبکہ دوسری جانب برآمدات میں کمی معیشت کیلئے جلتی پر تیل کا کام کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کو چاہیے کہ فوری طور پر برآمدی شعبہ کیلئے بنیادی ان پٹ کی لاگت کو کم کر دیا جائے تاکہ کم پیداواری لاگت سے تیار کردہ مصنوعات کو عالمی منڈی میں لے جاکرمقابلے میں فروخت کر کے ملک کیلئے زرمبادلہ کمانے کے ساتھ ساتھ عالمی منڈیوں میں پاکستان کیلئے جگہ بنائی جا سکے۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت تاجر رہنماؤں کو بھی تجارت کے حوالے سے بنائی جانے والی معاشی پالیسیوں کو حصہ بنایا جائے تاکہ بزنس مین کمیونٹی کیلئے زیادہ سے زیادہ آسانیاں پیدا کی جاسکیں۔

مزید : کامرس