زینب کا قتل : پیپلز پارٹی کا شہباز شریف ، رانا ثنا ء اللہ کے استعفٰی کا مطالبہ ، ملزمان کو فوری سزا دی جائے: سیاسی رہنما

زینب کا قتل : پیپلز پارٹی کا شہباز شریف ، رانا ثنا ء اللہ کے استعفٰی کا مطالبہ ...

لندن ،اسلام آباد،لاہور،قصور،پشاور(ایجنسیاں، مانیٹرنگ ڈیسک ،ایجوکیشن رپورٹر) پیپلز پارٹی نے قصور واقعے کے بعد وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ کے استعفوں کا مطالبہ کر دیا ہے۔ اپوزیشن لیڈر سید خورشید شاہ اورترجمان پیپلز پارٹی چوہدری منظور نے کہا ہے کہ اگر شہباز شریف مزید اقتدار میں رہا تو آج بلھے کا قصور لٹا ہے کل پورا پنجاب لٹ جائے گا،رائیونڈ میں مور مرنے پر ایس پی کو معطل کیا گیا، مور کا اتنا دکھ تھا تو اس معصوم ننھی جان کے بدلے ،وزیر اعلیٰ پنجاب استعفیٰ دیں۔پارلیمنٹ ہاؤس میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خورشید شاہ نے وزیر اعلیٰ پنجاب اور رانا ثنا اللہ کے استعفیٰ کا مطالبہ کر تے ہوئے کہا کہ رائیونڈ میں مور مرنے پر ایس پی کو معطل کیا گیا،مور کا اتنا دکھ تھا تو اس معصوم ننھی جان کے بدلے وزیر اعلیٰ پنجاب کو استعفیٰ دینا چاہئے،نواز شریف کے جارحانہ رویے سے ملک کی تباہی ہوگی،نواز شریف کے رویے سے ریاست کمزور ہوگی ۔علاوہ ازیں ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں پرویز مشرف نے کہا ہے کہ زینب کے گھناؤنے قتل کے خلاف میری مذمت کیلئے صرف الفاظ کافی نہیں، قتل کرنیوالے وحشی نے پوری انسانیت کا بری طرح قتل کیا۔اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ نواز شریف نے خودکش جیکٹ پہن رکھی ہے، وہ ہر ایک کو تباہ کرنا چاہتے ہیں،بچی کے ساتھ ظلم ہوگیا اور ان کے کان پر جوں تک نہ رینگی ۔قصور واقعہ پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے کہا پنجاب کے حکمرانوں کو موقع ملے تو سعودیوں کے قدموں میں جا کر بیٹھتے ہیں، حکومت کا کوئی وجود نہیں ۔ قائد ملت جعفریہعلامہ ساجد علی نقوی نے قصور میں بچی سے زیادتی کے واقعہ پرگہرے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عوام کے جان و مال کا تحفظ اور شعور اجاگر کرنا ریاستی ذمہ داری ، جسے پورا نہیں کیا جارہا، رول آف لاء کا فقدان، پراسیکیوشن پیچیدہ ، مبہم ہونے کے باعث عدالتی نظام فاسد ہوچکا، مجرمان کو سزائیں نہیں ملتی جس کے باعث آئے روز ایسے اندوہناک واقعات رونماہورہے ، ایسے درندوں کو پاک کرنے کیلئے عملی اقدامات اٹھائے جائیں۔ چیف جسٹس اور آرمی چیف کی جانب سے لیا جانیوالا نوٹس اور وزیراعلیٰ پنجاب کی جانب سے بنائی جانیوالی جے آئی ٹی احسن اقدام ہے ۔عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے کہا کہ زینب کا قتل موجودہ حکمرانوں کے منہ پر طمانچہ ہے مظاہرین پر پولیس کی فا ئرنگ کرنا پولیس کا وطیرہ بن گیا ہے سلتنطت اشرافیہ بچوں کو تحفظ دینے میں بری طرح ناکام ہو چکے ہیں نواز شریف کے درباری ملک میں افرا تفری چا ہتے ہیں رانا ثناء اللہ اور طلال چوہدری کے ساتھ یہی واقع رونما ہو تا تو ان کو معلوم ہو تا کہ بچی کا دکھ کیا ہوتاہے ؟ اِن خیالات کا اِظہار اِنہوں نے اوکاڑہ میں سٹی پریس کلب کے صحا فیوں سے ٹیلی فونک گفتگو کر تے ہو ئے کیا ۔امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ قصور کے واقعہ پر وزیراعلٰی پنجاب شہباز شریف کو عوام کے سامنے کھڑے ہو کر جواب دینا چاہئے تھا۔ قصور وزیراعلٰی کے دفتر سے ایک گھنٹہ کے فاصلے پر ہے پھر بھی وہ رات کے اندھیرے میں قصور آئے۔ قصور کے اراکین اسمبلی کو غیرت کا مظاہرہ کرتے ہوئے مستعفی ہونا چاہئے۔ غریبوں کے خون کی کوئی قیمت نہیں۔ زینب کا خون تقاضا کرتا ہے کہ ظالمانہ نظام کے خلاف اٹھ کھڑا ہونا چاہئے انہوں نے کہاکہ معصوم بچی کو اغواء کر کے بے دردی سے قتل کیا گیا ۔ عوامی نیشنل پارٹی کے سربراہ اسفند یار ولی خان نے قصور میں معصوم بچی زینب کے ساتھ زیادتی کے بعدقتل کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ معصوم زینب کے ساتھ ظلم و بربریت کی انتہاء کی گئی ہے ننھی زینب کے واقعے نے پورے معاشرے کو جھنجوڑ کر رکھ دیا ہے واقعے کی فوری تحقیقات کرکے ذمہ دار کو عبرت ناک سزا دی جائے ۔ ایسے واقعات کا رونماء ہونا عظیم قومی المیہ ہے ، اور زینب کا واقعہ ناقابل معافی جرم ہے ، ملک میں جنگل کا قانون ہے اور سی سی ٹی وی فوٹیج ملنے کے بعد پولیس نے بچی کو تلاش کرنے کی زحمت گوارا نہ کی ۔

سیاسی رہنما

مزید : صفحہ اول