سندھ اسمبلی، محکمہ اوقاف سے متعلق وقفہ سوالات 15 منٹ میں نمٹا دیا گیا

سندھ اسمبلی، محکمہ اوقاف سے متعلق وقفہ سوالات 15 منٹ میں نمٹا دیا گیا

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سندھ اسمبلی میں جمعرات کو محکمہ اوقاف سے متعلق وقفہ سوالات 15 منٹ میں نمٹا دیا گیا ۔ وزیر اعلیٰ سندھ کے مشیر برائے اوقاف سید غلام شاہ جیلانی نے ارکان کے تحریری اور ضمنی سوالوں کے جوابات دیئے ۔ اسپیکر آغا سراج درانی نے سید غلام شاہ جیلانی کی طرف سے وقفہ سوالات کو 15 منٹ میں نمٹانے کو سراہا اور کہا کہ ’’ ویلڈن ‘‘ جیلانی صاحب ۔ اسپیکر نے کہا کہ غلام شاہ جیلانی خود پیر ہیں اور وہ شوکارا مار کر ایوان میں آئے اور اپنی صفائی کر گئے ۔ متعدد ارکان کے تحریری اور ضمنی سوالوں کے جوابات دیتے ہوئے سید غلام شاہ جیلانی نے کہا کہ درگاہ گر ہوڑی شریف میرپورخاص محکمہ اوقاف کے انتظامی کنٹرول میں نہیں ہے ۔ لہذا محکمہ کو درگاہ کی حالت کے بارے میں کچھ معلوم نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ میرپورخاص میں اوقاف کی زمین پر بااثر لوگوں کا قبضہ نہیں ہے بلکہ محکمہ اوقاف نے قانون کے مطابق کچھ اراضٰ زرعی مقاصد کے لیے لیز کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ حضرت شاہ عبداللطیف بھٹائیؒ اور حضرت لعل شہباز قلندر ؒ کے مزارات پر تعمیر و مرمت کا کام جاری رہتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 2015 ء سے 2017 تک محکمہ اوقاف میں کوئی بھرتیاں نہیں ہوئی ہیں ۔ انہوں نے صوبے بھر میں محکمہ اوقاف کے زیر انتظام مزارات سے حاصل ہونے والے نذرانوں کی تفصیلات بھی ایوان میں پیش کیں ۔

مزید : کراچی صفحہ اول