رنگے ہاتھوں ایئرپورٹ پر پکڑی گئی غیرملکی لڑکی نے پاکستانی اداروں میں ’’جنگ‘‘ چھیڑ دی، تفصیلات ایسی کہ جان کرہی پاکستانی حیران پریشان رہ جائیں

لاہور (ویب ڈیسک) لاہور ایئر پورٹ سے 9کلو ہیروئن لے جانے کی کوشش میں گرفتار ہونے والی چیک ریپبلک کی جواں سال اور خوبرو 21سالہ ماڈل گرل پاکستان کے تینوں بڑے محکموں کے درمیان تنازعہ کا باعث بن گئی ہے۔

روزنامہ نوائے وقت کے مطابق اینٹی نارکوٹکس اور اے ایس ایف تفتیش کیلئے لڑکی کو اپنی اپنی تحویل میں رکھنے کیلئے کوشاں ہیں جبکہ محکمہ کسٹم چیک ریپبلک کی ماڈل کو کسی صورت کسی دوسرے محکمہ کے حوالے کرنے کو تیار نہیں۔ ایئرپورٹ پر ایک دوسرے کے خلاف سخت جملوں کے تبادلے کے بعد ایک دوسرے کو خطوط لکھنے کا سلسلہ جاری ہے اور خوبرو لڑکی کی حوالگی کا مطالبہ کیا جارہا ہے۔

اخبار کا مزید کہنا ہے کہ معاملہ اتنی شدت اختیار کر گیا ہے کہ تینوں محکمے دفتری کام کے بجائے لڑکی کے حصول کے لیے کوشاں ہیں جبکہ اس حوالے سے تینوں محکموں کے افسران نے قانونی کتابوں کا مطالعہ بھی شروع کر دیا ہے۔ قانون کے مطابق لڑکی کی حوالگی اینٹی نارکوٹکس کو ہونی چاہیے اور اینٹی نارکوٹکس ہی اس سے تفتیش کا اختیار رکھتا ہے تاہم اے ایس ایف اور کسٹم افسران بھی اس حوالے سے قانونی مطالعے کر رہے ہیں۔

معلوم ہوا ہے کہ چیک ریپبلک کی رہائشی خوبرو ماڈل ٹیریزا کو 15نومبر 2017ءکو پاکستان کا ویزا جاری ہوا۔ ویزا کے استعمال کی آخری تاریخ 14فروری 2018ءہے اور وزٹ ویزا سنگل انٹری کے ساتھ 30دنوں کے لیے جاری کیا گیا۔ 21سالہ ٹیریزا کے متعلق معلوم ہوا ہے کہ یہ چیک ریپبلک کی ماڈل ہے اور اس کا شمار چیک ریپبلک کی خوبصورت ماڈلز میں ہوتا ہے۔

پاکستان آنے کے بعد ٹیریزا لاہور ایئرپورٹ سے ابوظہبی جانے کے لیے روانہ ہوئی تو ایئرپورٹ پر اس وقت دلچسپ صورتحال پیدا ہوگئی جب ٹیریزا کے بیگ سے 9کلو ہیروئن نکلی اور اے ایس ایف‘ اینٹی نارکوٹکس اور کسٹم اہلکاروں کے درمیان لڑکی کو حراست میں لینے پر تلخ جملوں کا تبادلہ شروع ہوگیا۔

تینوں محکموں کے اہلکار لڑکی کو تحویل میں لینے کی بھرپور کوششیں کرتے رہے تاہم کسٹم اہلکاروں نے حراست میں لے لیا۔ ذرائع نے مزید بتایا ہے کہ اینٹی نارکوٹکس نے لڑکی کی فوری حوالگی کے حوالے سے کسٹم حکام کو خط لکھا ہے جس میں کہا گیا ہے قانونی طور پر صرف اینٹی نارکوٹکس ہی منشیات لے جانے والے ملزم کے خلاف کارروائی کرسکتی ہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...