وہ فیس بک گروپ جس نے معصوم زینب کے معاملے کا مذاق اڑانے میں کوئی کسر نہ چھوڑی، ایسی ایسی تصاویر شیئر کر دیں کہ ہر پاکستانی کا خون کھول اٹھا، دیکھ کر آپ غصے سے آگ بگولہ ہو جائیں گے

وہ فیس بک گروپ جس نے معصوم زینب کے معاملے کا مذاق اڑانے میں کوئی کسر نہ چھوڑی، ...
وہ فیس بک گروپ جس نے معصوم زینب کے معاملے کا مذاق اڑانے میں کوئی کسر نہ چھوڑی، ایسی ایسی تصاویر شیئر کر دیں کہ ہر پاکستانی کا خون کھول اٹھا، دیکھ کر آپ غصے سے آگ بگولہ ہو جائیں گے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) قصور میں سات سالہ معصوم زینب کو زیادتی کے بعد قتل کیا گیا تو پورا پاکستان سوگ میں ڈوب گیا اور ہر کوئی درندہ صفت مجرم کو پکڑنے اور کیفر کردار تک پہنچانے کا مطالبہ کرنے لگا۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”رمضان میں یہ ہمیں دین سکھاتی ہے۔۔۔“ صنم بلوچ کی ایک ایسی ”متنازعہ“ تصویر منظرعام پر آ گئی کہ سوشل میڈیا پر طوفان برپا ہو گیا، صارفین نے ہنگامہ کھڑا کر دیا

قتل کی خبر سامنے آنے کے بعد قصور کے مختلف علاقوں میں ہزاروں لوگوں کی جانب سے احتجاج کا سلسلہ شروع ہو گیا جبکہ سوشل میڈیا پر بھی گہرے دکھ و غم کا اظہار کیا گیا واقعے کی شدید مذمت کی گئی اور مجرم کو جلد از جلد گرفتار کر کے قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ شروع ہو گیا۔

لیکن ایک فیس بک گروپ ایسا بھی تھا جس نے اس المناک اور دل دہلا دینے والے واقعے کو بھی مذاق کا نشانہ بنا ڈالا اور ایسی ایسی تصاویر شیئر کیں کہ ہر پاکستانی کا خون کھول اٹھا۔ ”ڈینک سٹوڈیو“ نامی اس فیس بک گروپ نے اخلاقیات کے تمام اصولوں کی دھجیاں اڑا دیں اور دل گرفتہ کر دینے والے واقعے پر مذاق کا سلسلہ جاری رکھا۔

اس فیس بک گروپ کی جانب سے پہلی تصویر یہ شیئر کی گئی

اس کے بعد زینب کیساتھ زیادتی اور قتل سے متعلق اخبار میں چھپنے والی خبر کا خاکہ شائع کرتے ہوئے انتہائی غلیظ بات لکھی گئی جسے ان گھٹیا اور انسانیت سوز الفاظ کو حذف کر کے بیان کیا جا رہا ہے۔ لکھا گیا کہ ”جب بڑی عید میں کچھ دن رہ گئے ہوں اور ’برڈ فلو‘ کے باعث مرغی بھی دستیاب نہ ہو تو پھر آپ کسی اور جانب دیکھتے ہیں“

بات یہیں پر ختم نہیں ہوئی بلکہ ذاکر نائیک کی دو تصاویر لے کر اس سوال کیساتھ شیئر کی گئیں کہ ”قربانی کے بعد کھال کیساتھ کیا کرنا چاہئے؟“ اور پھر ذاکر نائیک کی ایک تصویر کے سامنے ’جلی‘ ہوئی کھالیں دکھائی گئیں جبکہ دوسری تصویر زینب کی کوڑے کے ڈھیر میں پڑی لاش کی تھی اور ذاکر نائیک کو اس کی تائید کرتے دکھایا گیا۔

یہ سب دیکھ کر یقینا آپ کا دل بھی خون کے آنسو رو رہا ہو گا اور غصے سے آگ بگولہ ہوئے جا رہے ہوں گے لیکن اس سب کے پیچھے موجود افراد کے ذہنوں میں گھسی شیطانیت بیان کرنے کیلئے الفاظ بھی کم پڑ جاتے ہیں۔ یہ بہت گھٹیا، انسانیت سوز اور دلدوز ہے اور یہ سوچ کر بھی تکلیف ہوتی ہے کہ یہ سب انسان ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”سارا علی خان سمیت دو لڑکیاں، ایک ہی بیڈ اور 2 لڑکے۔۔۔“ سیف علی خان کی بیٹی کی ایسی ویڈیو لیک ہو گئی کہ بھارت میں ’بھونچال‘ آ گیا

اس معاملے پر غصے میں مبتلا ہونے والے پاکستانیوں نے گروپ کو رپورٹ کرنا شروع کر دیا ہے کیونکہ سوشل میڈیا صارفین کا کہنا ہے کہ اس طرح کا مواد کسی صورت بھی سوشل میڈیا پر نہیں ہونا چاہئے۔ پوری قوم اس معاملے پر غصے میں مبتلا ہے اور ایسے میں اس طرح کی حرکت کرنا انتہائی شرمناک ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس