بلوچستان کی خواتین کو تعلیم،صحت کی عدم دستیابی پر حکومتی خاموشی لمحہ فکریہ:سراج الحق

بلوچستان کی خواتین کو تعلیم،صحت کی عدم دستیابی پر حکومتی خاموشی لمحہ ...

  



کوئٹہ (آن لائن)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ جماعت اسلامی کو موقع ملے گا تو بلوچستان ترقی کریگاجو لوگ خوشحالی اسلامی بلوچستان چاہتے ہیں وہ جماعت اسلامی کا ساتھ دیں بلوچستان کی خواتین کو معیاری تعلیم وصحت کی سہولیات دینے کیلئے حکومت کا خاموش ہونا لمحہ فکریہ ہے دوردرازکی خواتین کو علاج وتعلیم کی سہولت تو دورپینے کا صاف پانی تک میسر نہیں بلوچستان کی بیٹیوں وبہنوں کو زیورتعلیم سے آراستہ کرنے کیلئے خواتین اپنا کردار ادا کریں جماعت اسلامی کی خواتین کا بلوچستان میں خواتین کی دینی وعصری تعلیم عام کرنے میں اہم کردارہے۔ وفاق کی غفلت کیساتھ بلوچستان کی سیاسی قیادت نے بھی قوم کو تباہ کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑی قوم کوپوچھنا چاہیے کہ کب تک انہی لوگوں کو آزماتے رہیں گے جو مسائل ومشکلات پیدا کرنے کے ذمہ دارہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں ہفتہ کو کوئٹہ میں جماعت اسلامی خواتین کے قرآن انسٹیٹیوٹ کے دورے کے دوران گفتگومیں کہی اس موقع پر جماعت اسلامی کے صوبائی امیر مولانا عبدالحق ہاشمی،جماعت اسلامی خواتین کے صوبائی وضلعی ذمہ داران شازیہ عبداللہ،بی بی علیقہ، روبینہ علی اورفرزانہ اعجاز بھی موجودتھی اس موقع پر قرآن انسٹیٹیوٹ کی کارکردگی رپورٹ ومسائل کے حوالے سے انسٹیٹیوٹ کے نگران نے سنیٹرسراج الحق کو بریفنگ دی۔سنیٹرسراج الحق نے کہاکہ بلوچستان کے دوردرازعلاقوں میں تعلیم عام کرنے اور عوام کے سہولیات پہنچانے کی بہت زیادہ ضرورت ہے بدقسمتی سے وفاق کیساتھ میڈیا اور قومی جماعتوں نے بلوچستان کے مسائل سے چشم پوشی اختیار کی جس کی وجہ بلوچستان کے مسائل میں کمی کے بجائے اضافہ ہورہا ہے۔عوام کو سو چناچاہیے کہ اگر حقیقی دینی اسلامی عوامی تبدیلی چاہتے ہیں تو جماعت اسلامی کا ساتھ دیں۔

سراج الحق

مزید : صفحہ آخر