موجودہ حکومت بیرونی ایجنڈے پر کار فرما ہے،مولانا گوہر شاہ

    موجودہ حکومت بیرونی ایجنڈے پر کار فرما ہے،مولانا گوہر شاہ

  



چارسدہ (بیورورپورٹ)سابق رکن قومی اسمبلی مولانا سید گوہر شاہ نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت یہود و ہنود کے ایجنڈے پر کارفرما ہے۔کشمیر فروش وزیر اعظم نے عوام پر ناقابل برداشت مہنگائی کا بوجھ ڈال کر جینے کا حق چھین لیا ہے۔اپوزیشن کے بعض پارٹیوں نے مولانا فضل الرحمان کے ساتھ دھوکہ کیا ہے۔وہ فاروق اعظم چوک میں حکومت کے خلاف جاری پلان سی کے تحت منعقدہ احتجاجی ریلی کے بعد احتجاجی مظاہرے سے خطاب کر رہے تھے۔اس موقع پر تحصیل امیر مولانا عبد الروف شاکر نے بھی خطاب کیا۔مولانا سید گوہر شاہ نے احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت تاریخ کی ناکام ترین حکومت ہے جس میں غریب اور متوسط طبقے کا جینا حرام ہو چکا ہے۔بدترین مہنگائی کی وجہ سے عوام فاقوں پر مجبور ہیں جبکہ سلیکٹڈ وزیر اعظم عوام کو جھوٹے وعدوں اور دعوں پر دھوکہ دینے کی ناکام کوشش کر رہے ہیں۔نیب قانون میں ترمیم کرکے عمران خان اپنے ساتھیوں کا بچانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ملم جبہ،بی آر ٹی اور بلین ٹری سونامی میں اربوں روپے کرپشن چھپانے کے لیے نیب قانون میں ترمیم کی گی جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔انہوں نے کہا کہ کپتان پارلیمنٹ کو بے توقیر کر رہے ہیں۔کپتان کی حکومت ہر محاذ پر ناکام ہو چکی ہے۔عمران خان کے تمام دعوے اور وعدے جھوٹ کا پلندہ ثابت ہوئے۔انہوں نے کہا کہ عوام کی نظریں مولانا فضل الرحمان پر ہے اور انشاء اللہ بہت جلد پاکستان میں از سرنو انتخابات کا انعقاد کر کے اقتدار حقیقی نمائندوں کے حوالے کیا جائے گا۔ موجودہ حکومت یہود و ہنود کے ایجنڈے پر کارفرما ہے۔کشمیر فروش وزیر اعظم نے عوام پر ناقابل برداشت مہنگائی کا بوجھ ڈال کر جینے کا حق چھین لیا ہے۔اپوزیشن کے بعض پارٹیوں نے مولانا فضل الرحمان کے ساتھ دھوکہ کیا ہے مگر ان کو بہت جلد اپنے غلطی کا احساس ہو جائے گا۔موجودہ حکومت کے خاتمے تک جدوجہد جاری رکھے جائیں گے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر