ہندو بالمیکی اقلیت کا قبرستان واگزار کرا لیا گیا، چار انتقالات منسوخ

ہندو بالمیکی اقلیت کا قبرستان واگزار کرا لیا گیا، چار انتقالات منسوخ

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)ہندو بالمیکی اقلیت کا قبرستان واگزار کرا لیا گیا۔ چار انتقالات منسوخ۔ تفصیلات کے مطابق ڈپٹی کمشنر ڈیرہ اسماعیل خان محمد عمیر نے چار غیر قانونی انتقالات منسوخ کرتے ہوئے قدیم بالمیکی قبرستان جسکی اراضی کی مالیت کروڑوں روپے بتائی جاتی ہے اور جس پر 28سال سے غیر قانونی انتقالات کے ذریعے قبضہ کیا گیا تھا کو واگزار کرا لیا ہے۔ انتظامیہ کے اس اقدام کا ہندو برادری سمیت ڈیرہ اسماعیل خان کے تمام شہریوں نے زبردست خیر مقدم کیا ہے اور اسے اسلامی تعلیمات جو کہ اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ کی ضمانت دیتا ہے کا مظہر قرار دیا ہے۔ یاد رہے کہ ایک طر ف اپنے آپ کو جمہوری اقدار کا چمپیئن کہنے والا بھارت مسلمانوں سمیت تمام اقلیتوں کے حقوق غصب کر کے انہیں ظلم و ستم کا نشانہ بنا رہا ہے تو دوسری طرف پاکستان کی حکومت اور انتظامیہ نہ صرف اقلیتوں کے حقوق کی فراہمی کو یقینی بنا رہی ہے بلکہ کسی بھی انفرادی زیادتی کا تدارک کرنے کیلئے بھی پوری طرح چوکس اور مصروف عمل ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر