مودی نے کشمیر پر حمایت کرنے کیلئے بھارت واپسی کی پیشکش کی،معروف مذہبی سکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک نے بڑادعویٰ کردیا، مودی کی اصلیت بے نقاب کردی

مودی نے کشمیر پر حمایت کرنے کیلئے بھارت واپسی کی پیشکش کی،معروف مذہبی سکالر ...
مودی نے کشمیر پر حمایت کرنے کیلئے بھارت واپسی کی پیشکش کی،معروف مذہبی سکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک نے بڑادعویٰ کردیا، مودی کی اصلیت بے نقاب کردی

  



نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارت کے معروف مذہبی سکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک نے دعویٰ کیا ہے کہ مودی حکومت نے ان سے ڈیل کرنے کی کوشش کی ہے کہ اگر وہ مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے حوالے سے مودی سرکار کی حمایت کردیں تو ان کے خلاف کی جانے والی تمام کارروائیاں روک کر بھارت واپسی کی راہ ہموار کردی جائے گی۔انہوں نے بتایا کہ مودی حکومت نے ستمبر دوہزار انیس میں ایک وفد کے ذریعے ان سے رابطہ کیا تھا ۔

سماجی رابطے پر موجود ڈاکٹر ذاکر نائیک کے ویڈیو پیغام میں وہ مزید کہتے ہیں ان سے صحافیوں کی بڑی تعداد نے رابطہ کرنے کی کوشش کی ہے کہ جس پر وہ بتارہے ہیں کہ تقریبا ساڑھے تین ماہ پہلے بھارتی حکام نے ان سے رابطہ کیاتھااور بتایا کہ وہ وزیر اعظم مودی کی خصوصی ہدایت پر ان سے ملنے آئے ہیں۔ڈاکٹر ذاکر کے مطابق حکام نے وزیر اعظم مودی کا پیغام دیا کہ اگر وہ (ذاکر)کشمیر کے حوالے سے بی جے پی کے اقدام کی حمایت کریں تو بدلے میں ان پر لگائے گئے الزامات اور ان کی بھارت واپسی میں حائل رکاوٹیں ختم کردی جائیں گی۔

ڈاکٹر ذاکر کے مطابق حکام نے یہ بھی کہا کہ وہ حکومت اور ذاکر نائیک کے درمیان موجود تمام غلط فہمیوں کو بھی ختم کرنا چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حکام نے انہیں بتایا کہ وہ اس طرح حکومت اور مسلمان اقلیت کے درمیان موجود تناو کو ختم کرنا چاہتے ہیں۔ذاکر نائیک کے مطابق انہوں نے حکومتی پیشکش کو فوری طور پر مسترد کردیا۔

مزید : اہم خبریں /قومی /بین الاقوامی