کابینہ سے علیحدگی کے بعد ایم کیو ایم نے حکومت سے عدم تعاون کا ایک اور فیصلہ کرلیا

کابینہ سے علیحدگی کے بعد ایم کیو ایم نے حکومت سے عدم تعاون کا ایک اور فیصلہ ...
کابینہ سے علیحدگی کے بعد ایم کیو ایم نے حکومت سے عدم تعاون کا ایک اور فیصلہ کرلیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) ایم کیو ایم پاکستان نے وفاقی کابینہ سے علیحدگی کے بعد کراچی بحالی کمیٹی کے اجلاس کا بائیکاٹ کرنے کا اعلان کردی، ایم کیو ایم کے ارکان کمیٹی شریک نہیں ہونگے ۔

نجی نیوز چینل کے مطابق وفاقی کابینہ سے علیحدگی کے بعد ایم کیو ایم پاکستان نے کراچی بحالی کمیٹی کے اجلاس کا بائیکاٹ کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ میئر کراچی وسیم اختر ، فیصل سبزواری اور کنور نوید جمیل کمیٹی کے رکن ہیں۔ کراچی بحالی کمیٹی کا اجلاس سوموار صبح دس بجے اسد عمر کی صدار ت میں گورنر ہاﺅ میں ہونا ہے جس میں ایم کیو ایم پاکستان کے ارکان کمیٹی نے بھی شرکت کرنا تھا لیکن اب ایم کیو ایم کی جانب سے اجلاس کےبائیکاٹ کافیصلہ کیاگیا ہے ۔

واضح رہے کہ اس سے قبل ایم کیو ایم کے کنوینر خالد مقبول صدیقی نے وفاقی کابینہ کوچھوڑنے کا اعلان کرتے ہوئے بطور وفاقی وزیر برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی اپنی تمام مصروفیات ترک کردی ہیں ،ایم کیو ایم کی جانب سے یہ فیصلہ وفاقی حکومت کی ترقیاتی کاموں پرسست روی کے باعث کیاگیا ہے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی