پیپر لیک کرنے سے متعلق مقدمہ، ملزمان کے جسمانی ریمانڈ میں توسیع

پیپر لیک کرنے سے متعلق مقدمہ، ملزمان کے جسمانی ریمانڈ میں توسیع

  

لاہور(نامہ نگار)ضلع کچہری میں ڈیوٹی جج جوڈیشل مجسٹریٹ ذوالفقار باری نے پنجاب پبلک سروس کمیشن کے پیپر لیک کرنے سے متعلق مقدمہ میں ملوث 5ملزمان کے مزید تین روزہ جسمانی ریمانڈ میں توسیع کر دی عدالت نے ملزمان کا دوبارہ میڈیکل کرانے کا حکم بھی دیاہے،گزشتہ روز کیس کی سماعت شروع ہوئی تو ملزمان کے وکلاء کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ ملزمان پر تشدد کیا گیا ملزمان کو ڈر ہے کہ ان سے میڈیکل نہ کرانے کیلئے رضا مندی لی گئی ہمیں کہا گیا میڈیکل ہوا تو مزید تشدد ہو گا، ملزمان کا میڈیکل نہ کرانے پر فاضل جج نے برہمی کااظہار کیا،دوران سماعت عدالت کو بتایا گیا کہ جی آئی ٹی رپورٹ کے مطابق ملزمان نے پی پی ایس سی کے 7امتحانات کے پیپر لیک کرنے کا انکشاف کیاہے، ملزمان کے ساتھ مزید ملزمان بھی ملوث ہیں،گزشتہ روزاینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ جے آئی ٹی نے ملزمان کو کمرہ عدالت میں پیش کیا،ملزمان میں گوہر علی،غظنفر خاں،مظہر عباس وقار اکرم ،فہد علی اور احمد شامل ہیں،ملزمان نے پی پی ایس کے پرچے لیک کیے عدالت سے تفتیشی ٹیم نے استدعا کی کہ ملزمان نے پاسورڈ لگا کر متعدد امیدواروں کے رزلٹ تبدیل کئے، ملزمان سے تفتیش دیگر ملزمان کی گرفتاری کے لئے مزید جسمانی ریمانڈ منظور کیا جائے۔

مزید :

علاقائی -