چیئرمین پی ٹی وی نعیم بخاری کے تقرر کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا 

چیئرمین پی ٹی وی نعیم بخاری کے تقرر کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا 

  

لاہور(نامہ نگار)چیئرمین پی ٹی وی نعیم بخاری کے تقرر کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا گیا  لاہورہائی کورٹ مسٹر جسٹس شمس محمود مرزا نے درخواست گزار کے وکیل کو درخواست کے ساتھ متعلقہ دستاویزات ساتھ لگانے کی ہدایت کردی دوران سماعت فاضل جج نے قراردیا کہ پہلے آگاہ کیا جائے کہ پی ٹی وی پبلک سیکٹر کمپنی ہے یا کارپوریشن؟ اس کے بعد کیس پر مزید کارروائی ہو گی درخواست گزارشہری عثمان غنی کی جانب سے وفاقی حکومت،وفاقی سیکرٹری اطلاعات،سیکرٹری داخلہ پاکستان اور چیئرمین پی ٹی وی نعیم بخاری کو فریق بنایا گیا ہے،درخواست گزار کا موقف ہے کہ نعیم بخاری پاکستان ٹیلی وژن کے چیئرمین کے عہدہ کے معیار پر پورا نہیں اترتے انہیں وزیراعظم نے ذاتی پسند کی بناء پر چیئرمین پی ٹی وی مقرر کیا ہے چیئرمین پی ٹی وی کے تقرر کیلئے کوئی اشتہار نہیں دیا گیا یہ تقرری کمپنی ایکٹ 2017 کے سیکشن 166 کی بھی خلاف ورزی ہے،عدالت سے استدعاہے کہ نعیم بخاری کی تعیناتی کو کالعدم قرار دیا جائے اور اس عہدہ پر قانون کے مطابق تقرر کی ہدایت کی جائے۔

چیلنج

مزید :

پشاورصفحہ آخر -