کوئی بھی اٹھارویں ترمیم کے خلاف نہیں، ناقص پٹرول بیچنے والے 192 پٹرول پمپس سیل کر دیئے : شبلی فراز

کوئی بھی اٹھارویں ترمیم کے خلاف نہیں، ناقص پٹرول بیچنے والے 192 پٹرول پمپس سیل ...
کوئی بھی اٹھارویں ترمیم کے خلاف نہیں، ناقص پٹرول بیچنے والے 192 پٹرول پمپس سیل کر دیئے : شبلی فراز
سورس: File

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیراطلاعات و نشریات شبلی فراز نے کہا ہے کہ کوئی بھی اٹھارویں ترمیم کے خلاف نہیں لیکن اس میں کچھ نقائص ہیں جن کو درست کیا جانا ضروری ہے،عوام کرپشن بچانے میں کسی کا ساتھ نہیں دیتے، این آراوملنےکےبعدبراڈشیٹ کامعاملہ سردخانےمیں چلاگیا،سمگل شدہ غیرمعیاری پیٹرول سے خزانے کے ساتھ ماحول کو بھی نقصان پہنچ رہا ہے ، ناقص پٹرول بیچنے والے 192 پٹرول پمپس کو سیل کردیا گیا ہے۔

وفاقی وزیر اطلاعات ونشریات سینیٹر شبلی فراز نےپریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ براڈ شیٹ کے حوالے سے قانونی ٹیم بنائی گئی ہے جو اس کےتمام نکات کو سامنے لائے گی،پرویز مشرف کے این آر او کے بعد یہ معاملہ سردمہری کا شکار ہو گیا تھا،براڈشیٹ کمپنی نےاہم انکشافات کیےہیں، نوازشریف کےلوگوں نےبراڈشیٹ کمپنی کوخریدنےکی کوشش کی۔انہوں نے بتایا کہ کابینہ اجلاس میں 15 نکاتی ایجنڈے پرغورکیا گیا جس میں کابینہ نے آڈیٹر جنرل کےاختیارات سے متعلق بل کی منظوری دی ہے اور آڈیٹر جنرل کا دائرہ کار بڑھایا گیا ہے، اجلاس میں پیٹرول کی سمگلنگ اور ناقص پیٹرول کی فروخت پر بھی بات ہوئی،ناقص پیٹرول فروخت کرنے پر 192 پمپس کو سیل کیا گیا ہے جبکہ مزید اقدامات بھی کیے جائیں گے،اجلاس میں خوراک کی اجناس کے حوالے سے بھی بات ہوئی کہ ان کی مسلسل فراہمی یقینی بنائی جائے،سندھ حکومت کی جانب سے گندم کی سپلائی روکنے پر قیمت بڑھی اور قلت بھی پیدا ہوئی،آئندہ ایسے مسائل سے بچنے کے لیے قانون سازی پر بھی مشاورت ہوئی،اجلاس میں جبری گمشدگیوں پر بھی بات ہوئی اور انسانی حقوق کی وزارت کی جانب سے اس ضمن میں بنے قانون کے حوالے سے وزارت قانون کو ہدایات جاری کی گئیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ 18ویں ترمیم کے بعد وزارتیں صوبوں کومنتقلی کی گئی ہے،موجودہ حکومت ادارہ جاتی اصلاحات کے لیے پرعزم ہے، 18ویں ترمیم میں موجود کچھ نقائص کودور کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ 18ویں ترمیم کے بعد وفاقی حکومت کے ملازمین کا حجم بھی بڑھ گیا ہے،پنشن بہت سنجیدہ معاملہ ہے،کئی اداروں کیلئےپنشن دینامشکل ہوگیاہے،حکومت نےاب تک جوریفارمزکی ہیں اس سےعوام کوآگاہ کیاجائےگا،عوام کرپشن کےخلاف نکلتےہیں،کرپشن بچانےکیلئےکوئی باہرنہیں نکلتا،پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ قصہ پارینہ بن چکا ۔

شبلی فراز کا کہنا تھا کہ ہم چاہتے ہیں کہ الیکشن صاف اورشفاف ہوں اوراس میں پیسے کا استعمال نہ ہو،یہ بھی  کوشش ہے کہ سینیٹ الیکشن شو آف ہینڈ کےذریعے ہوں۔اُنہوں نے کہا کہ اسدعمر نےاسامہ ستی کاکیس کابینہ میں اٹھایا،وزیراعظم نے اسامہ ستی کے قتل پر ناراضی کا اظہار کیا اور ہدایت کی جے آئی ٹی کی رپورٹ کے باوجود ورثاء جس طرح سے مطمئن ہوتے ہیں،اُسی طرح سے ہی تحقیقات کی جائیں۔

مزید :

قومی -