کرپشن کے ناسور نے ہمارے نظام کی جڑوں کو ہلا کر رکھ دیا ،وسیم اختر

کرپشن کے ناسور نے ہمارے نظام کی جڑوں کو ہلا کر رکھ دیا ،وسیم اختر

لاہور(پ ر)پارلیمانی لیڈرصوبائی اسمبلی وامیر جماعت اسلامی پنجاب ڈاکٹر سید وسیم اخترنے ’’نان گزیٹڈ‘‘ملازمین کی کرپشن اور بوگس ترقیوں کے حوالے سے تحریک التواء پنجاب اسمبلی کے سیکرٹریٹ میں جمع کروادی۔جمع کرائی جانے والی تحریک التواء میں کہاگیا ہے کہ ’’ 11جولائی 2015 کے ایک قومی اخبارکی خبر کے مطابق ’’ بہاولنگر میں نان گزیٹڈ ملازمین کرپشن کے ذریعے کروڑوں کے مالک بن گئے، ملازمین جعلی اسناد ، بوگس ترقیاں لے کر افسر بن گئے، پر کشش پوسٹوں پر تعینات۔‘‘کرپشن کے ناسور نے ہمارے نظام کی جڑوں کو ہلا کر رکھ دیا ہے ، اس معاشرتی برائی کی وجہ سے نا صرف ملکی خزانہ خالی ہو کر رہ گیا ہے

بلکہ اس کی وجہ سے معاشرے کے افراد کے جائز کام پیسہ کے بغیرہونا ناممکن نظر آتا ہے اور مزید تباہی کا سبب نا اہل لوگ ثابت ہوتے ہیں ۔ کرپٹ اور جعلی ڈگری ہولڈر افسران میرٹ اور اخلاص کی بجائے اپنی ساری توجہ اپنی جیب بھرنے پر دیتے ہیں حکومت کو چاہیے کہ کرپشن کے اس ناسور اور جعلی ڈگری ہولڈر افراد کے خلاف کارروائی کرے ۔ نیزجن افسران نے جعلی ڈگری ہولڈرز کو تعینات کیاہے ، ان کے خلاف سخت سے سخت فوری تادیبی کاروائی کرے‘‘۔علاوہ ازیں ڈاکٹر سید وسیم اختر نے کہاکہ ملک میں کرپشن کی انتہاہوچکی ہے۔پاکستان میں ہر سال500ارب روپے سے زائد کی کرپشن ہوتی ہے نیب کی جانب سے جورپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کروائی گئی ہے اس میں کرپٹ افسروں کی بیان کردہ تعداد آٹے میں نمک کے برابر ہے سارانظام کرپشن کی دلدل میں دھنس چکا ہے عوام کو اپنے جائزکام کروانے کے لئے بھی رشوت کاسہارالیناپڑتا ہے۔ضرورت اس امرکی ہے کہ ملک میں فوری طور پر احتساب کمیشن قائم کیاجائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4