شان مسعود نے سفارشی کا لیبل اتار پھینکا

شان مسعود نے سفارشی کا لیبل اتار پھینکا

لاہور(آئی این پی)قومی ٹیسٹ ٹیم کے کھلاڑی شان مسعود نے فتح گر اننگز سے سفارشی کا لیبل اتار پھینکا، اوپنر نے کہا ہے کہ منہ میں سونے کا چمچہ لے کر ضرور پیدا ہوا مگر اپنی جگہ بنانے کیلئے دوسروں سے زیادہ محنت کی۔ اپنے ایک انٹرویو میں انھوں نے کہا کہ منہ میں سونے کا چمچہ لے کر پیدا ہونے کے باوجود کسی عام پاکستانی کرکٹر سے زیادہ محنت کرکے ہی اپنی جگہ بنانے میں کامیاب ہوا ہوں، انڈر 13 سے19سطح تک کے ڈومیسٹک ٹورنامنٹس میں ٹیموں کے ساتھ ٹرینز پر طویل سفر کرتا رہا،اس دوران معمولی یومیہ الاؤنس پر گزارا کرنا پڑتا تھا۔انھوں نے کہا کہ میرے والد کرکٹ سے بے پناہ لگاؤ رکھتے ہیں، 14اکتوبر 1989کو میری پیدائش کے وقت بھی وہ پاکستان اور ویسٹ انڈیز کا میچ دیکھ رہے تھے، اس یادگار مقابلے میں وسیم اکرم نے ہیٹ ٹرک کی تھی، اگر والد سفارش پر یقین رکھتے اور اتنے ہی بااثر ہوتے جتنا انھیں ظاہر کیا جاتا ہے تو آج میں تمام فارمیٹ کی کرکٹ میں قومی ٹیم کا حصہ ہوتا۔ انھوں نے کہا کہ لوگوں کی جانب سے ٹائٹل دیے جانے پر کبھی الجھن محسوس نہیں کی۔البتہ میری کرکٹ میں فیملی کی دلچسپی اور میچز کے دوران ان کی موجودگی کے بارے میں سوالات پسند نہیں ہیں۔ شان مسعود نے کہا کہ پالے کیلی ٹیسٹ میں کپتان مصباح الحق اور یونس خان نے کہا تھا کہ اسکور بورڈ کے بجائے اپنی بیٹنگ پر توجہ رکھنی ہے،اسی فارمولے پر عمل کرتے ہوئے کامیاب رہا۔ان کا مزیدکہنا تھا کہ آئندہ بھی اسی طرح کی پرفامنس سے ناقدین کے منہ بند کرونگا،انہوں نے کہا کہ میری یہ پرفامنس مجھے ہمیشہ یاد رہے گی۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی