نوجوانوں کو صحابہ کرامؓ کی تعلیمات سے روشناس کرانا وقت کی اہم ضرورت،علامہ خالد

نوجوانوں کو صحابہ کرامؓ کی تعلیمات سے روشناس کرانا وقت کی اہم ضرورت،علامہ ...

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)دہشتگردی،انتہا پسندی کے خاتمے کیلئے نوجوان نسل کو صحابہ کرامؓ کی زندگیوں اور تعلیمات سے روشناس کرانا وقت کی اہم ضرورت ہے۔پوری دنیا میں مسلمانوں کا ناحق خون بہایا جارہا ہے۔اسلام امن وسلامتی کا درس دیتا ہے،فتنہ وفساد ،دہشت گردی اور قتل وقتال کی اسلام ہرگز اجازت نہیں دیتا۔شام،عراق،کشمیر ، فلسطین سمیت دیگر ممالک میں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کو فی الفور بند کروایا جائے۔اسلامی ممالک کو کمزور کرنے سازشیں قابل مذمت ہیں۔فلسطین میں اسرائیلی جارحیت اور کشمیر میں بھارتی ظلم وبربریت کی شدید مذمت کرتے ہیں۔ اقوام متحدہ اور عالمی برادری کشمیر اور فلسطین کے مسئلہ کے حل کیلئے سنجیدہ اقدامات کریں۔خلافت راشدہؓ کے نظام سے دوری کی وجہ سے امت مسلمہ مشکلات کا شکار ہے۔یہ بات سپریم کورٹ آف پاکستان کے سابق جج جسٹس (ر)ڈاکٹر علامہ خالد محمود ، قاری محمد حنیف جالندھری، زاہد محمود قاسمی ،مولانا امداد الحسن نعمانی،مولانا اکرام الحق خیری،مولانا عطاء اللہ خان، قاری تصور الحق ،ڈاکٹر اختر زمان غوری،مولانا فیض الحق ،مولانا نورالاسلام سمیت دیگر علماء ومشائخ نے ختم نبوت ایجوکیشن سینٹر برمنگھم میں ’’عظمت صحابہؓ واہلبیتؓ کانفرنس ‘‘ سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہی۔

۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ مسلمان صحابہ کرامؓ اور اہلبیتؓ کی پاکیزہ تعلیمات کو مشعل راہ بناکر مشکلات اور خطرات سے نبردآزما ہوسکتے ہیں۔اللہ تعالیٰ نے قرآن مجید میں اور نبی کریم ﷺ نے اپنے فرمان میں صحابہ کرامؓ سے راضی ہونے ،ان کے جنتی ہونے اور ان کے ایمان و عمل کو قیامت تک آنے والوں کیلئے معیار قراردیا ۔انہوں نے کہا کہ صحابہ کرامؓ و اہلبیتؓ کی تعلیمات کی روشنی میں اپنے اکابر واسلاف کے نقش قدم پر چلتے ہوئے اسلام کے آفاقی پیغام امن ومحبت ،سلامتی و رواداری کو عام کرنے کیلئے جدوجہد جاری رکھیں گے۔صحابہ کرامؓ واہلبیتؓ کا ایمان و عمل مسلمانوں کیلئے معیار حق و صداقت ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4