کاروباری سرگرمیوں کو فروغ دینے کیلئے نئی سرکوں کو کمرشل قرار دینے کا منصوبہ

کاروباری سرگرمیوں کو فروغ دینے کیلئے نئی سرکوں کو کمرشل قرار دینے کا منصوبہ

لاہور(جنرل رپورٹر) نگران صوبائی وزیر ہاؤسنگ سعید اللہ بابر نے ہدایت کی ہے کہ شہر میں کاروباری سرگرمیوں کے فروغ کے لئے نئی سڑکوں پر کمرشلائزیشن کی اجازت دینے کا جائزہ لیا جائے۔دوسرے شہروں سے لاہور کی طرف نقل مکانی کے نتیجے میں آبادی کے بڑھتے ہوئے دباؤ کے پیش نظر طویل المدتی ماسٹر پلان تیار کر کے رہائشی ‘تعلیمی‘کاروباری ‘صنعتی اور دیگر مقاصد کے لئے علیحدہ علیحدہ زون بنائے جائیں ۔تیز بارش سے عمارتوں کے اندر پانی داخل ہونے کی شکایات کے پیش نظر تعمیراتی قواعد میں بہتری لائی جائے‘ایل ڈی اے کو عوامی خدمت کا فعال ادارہ بنانے کے لئے تمام ضروری اقدامات کئے جائیں اور شہریوں کی سہولت کو ہر چیز پر ترجیح دی جائے وہگزشتہ روز لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے دورے کے موقع پر افسران سے بات چیت کر رہے تھے۔قبل ازیں ایل ڈی اے آفس جوہر ٹاؤن پہنچنے پر ڈائریکٹر جنرل ایل ڈی اے آمنہ عمران خان نے ان کا استقبال کیا ۔ اس موقع پر انہیں لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی تنظیم‘ذمہ داریوں اور فرائض سے آگاہ کیا گیا ۔بریفنگ کے دوران ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرلز سمیعہ سلیم‘ذیشان شبیر رانااور عبد الشکور ‘چیف انجینئر مظہر حسین خان‘چیف ٹاؤن پلانر سید ندیم اختر زیدی اور چیف میٹرو پولیٹن پلانر شکیل انجم منہاس کے علاوہ دیگر افسران بھی موجود تھے ۔ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل (ہیڈ کوارٹرز)سمیعہ سلیم نے بریفنگ دیتے ہوئے صوبائی وزیر کو بتایا کہ پراپرٹی ریکارڈ کی آن لائن تصدیق کے لئے ایل ڈی اے کے ون ونڈ وسیل پر پنجاب لینڈ ریکارڈ اتھارٹی کا خصوصی کاؤنٹر قائم کر دیا گیا ہے ۔ ایل ڈی اے ایمپلائز کے امور ملازمت اور ادارہ کے مالی حسابات چلانے کے لئے SAPسسٹم رائج کیا گیا ہے ۔ ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل (ہاؤسنگ) ذیشان شبیر رانا نے بتایا کہ شہریوں کی درخواستوں پر کم سے کم وقت عمل در آمد کے لئے چار رہائشی سکیموں کا ڈیٹا آن لائن کر دیا گیا ہے ‘ان میں گلبرگ‘ ا یونیوون ‘جوبلی ٹاؤن اور مصطفی ٹاؤن شامل ہیں۔سبزہ زار سکیم کے ڈیٹا کی کمپیوٹرائزیشن کا کام جاری ہے جس کے بعدجوہر ٹاؤن کے ڈیٹا کی کمپیوٹرائزیشن کی جائے گی۔انہوں نے بتایاکہ مصطفی ٹاؤن میں بوگس ایگزمشن کی شکایات کے پیش نظر ساقت سو سے زائد پلاٹوں کی فائلیں منسوخ کر دی گئی ہیں اورتقریباً چار ارب روپے کا ریفرنس بنا کر محکمہ اینٹی کرپشن کو ارسال کیا گیا ہے ۔ چیف انجینئر ایل ڈ ی اے مظہر حسین خان نے بتایا کہ لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی نے سال 2017-18کے دوران لاہور کے سب سے بڑے بیجنگ انڈر پاس ‘مال روڈ سے ہربنس پورہ تک کینال روڈ کی توسیع اور گرومانگٹ گلبرگ میں کیپٹن مبین شہید انڈر پاس کی تعمیر کے منصوبے مکمل کئے ہیں جبکہ اس وقت لاہور اورنج لائن میٹرو ٹرین اور شوکت خانم فلائی اوور کے تعمیراتی منصوبوں پر تیزی سے کام جاری ہے ۔ چیف میٹرو پولیٹن پلانر شکیل انجم منہاس نے بتایا کہ ایل ڈی اے نے نئی رہائشی سکیموں کی منظوری دینے کا عمل تیز کر دیا ہے ‘ابھی تک پچاس سکیموں کی منظوری دی جاچکی ہے جبکہ 179کے کیسز زیر کارروائی ہیں۔چیف ٹاؤن پلانر سید ندیم اختر زیدی نے بتایا کہ تعمیراتی قواعدپر عمل درآمدیقینی بنانے کے لئے تمام ضروری اقدامات کئے جار ہے ہیں۔

وزیر ہاؤسنگ

مزید : میٹروپولیٹن 1