پی پی 151میں چائے ، پانی ، کھانے ، مشروبات اور پھلوں سے ووٹر وں کی تواضع

پی پی 151میں چائے ، پانی ، کھانے ، مشروبات اور پھلوں سے ووٹر وں کی تواضع

حلقہ پی پی 151میں مسلم لیگ (ن) پاکستان تحریک انصاف، پیپلزپارٹی سمیت دیگر سیاسی جماعتوں کے 13امیدواروں نے میلہ لگا لیا حلقے کو مثالی بنانے کے دعوے اور الگ الگ منفرد انداز ووٹوں کے حصول کے لئے حلقے کی عوام کے خادم بننے کو بھی تیار ہو گئے پرجوش تقریر اور ایک دوسرے کی سیاسی جماعت پر سخت تنقید سننے کیلئے ووٹر گھروں سے باہر نکل آئے، میاں اسلم اقبال اور رانا مشہود میں دن رات کی بنیاد پر کانٹے دار مقابلے زور شور سے جاری ہے روزنامہ ’’پاکستان‘‘ کی جانب سے کئے جانے والے سروے کے دوران معلوم ہواہے کہ پی پی 151کے حلقے میں پیپلزپارٹی کے آصف ناگرہ، مسلم لیگ(ن) کے باقر حسین پاکستان تحریک انصاف کے میاں اسلم اقبال، آل مسلم لیگ کے رفاقت علی، جیپ کے سعید احمد خان، متحدہ مجلس عمل کے محمد ابوبکر ، عام عوامی پارٹی کے محمد محمود احمد، تحریک لبیک یا رسول اللہ کے منور زمان جبکہ آزاد امیدواروں میں حسن ارشاد ڈوگر، ضیاء المصطفیٰ، عمران جاوید قریشی، محمد ارشاد ڈوگر، محمد ہادی شاہ، سید عمران، محمد اکرم عثمان، نثار اکبر بھٹی اور ندیم اقبال خاصے متحرک ہو چکے ہیں۔ان 13امیدواروں نے جہاں صبح، دوپہر، شام کارنر میٹنگ کیساتھ عوام کو اپنے ساتھ جوڑ رکھا ہے وہاں چائے، پانی، کھانے ، مشربات اور پھل فروٹ کے آزادانہ استعمال سے حلقے کی عوام بھی سیریاب ہو کر کھانا تناول کرتی ہوئی دکھائی دے رہے ہیں اور تو اور پھولوں کی پتیاں بھی منوں کیساتھ استعمال کی جا رہی ہیں ڈھول والوں کی بھی موجیں لگ چکی ہیں اور وسیع پیمانے پر ان کا رزق بھی لگ چکا ہے جبکہ میوزیکل بینڈ والے دفاتروں کی بھی بکنگ ایک ماہ قبل کروائی گئی تھی یوں سمجھ لیجیے کہ 25جولائی تک پی پی 151کے 244512ووٹرز کیلئے 13خادم خدمت کے جذبے سے سرشار ہو کر خدمت خلق کے لئے ان کے تمام مطالبے بھی منظور کرتے ہوئے حلقے میں موجود ہیں اس وقت پی پی 151حلقے سے میاں اسلم اقبال نے اچھرہ کے علاقہ کمبوہ کالونی، بھٹی پارک، بابا اعظم چوک میراج پارک، گوندی ، پیر والی گلی، چاہ جموں سمیت چوک عاشق آباد، جاوید سڑک 3نمبر سٹاپ شاداب چوک، ملت پارک میں ڈور ٹو ڈور کمپین جاری رکھی ہوئی ہے وہاں سے 2مرتبہ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان اور تحریک انصاف کے سینئر رہنما عبدالعلیم خان کو یہاں شکست دے چکے ہیں وہاں اس بار بھی ووٹر (ن) لیگ کے ساتھ کھڑے ہوں گے اور شیر کی دھاڑ چاروں طرف سنائی بھی دے گی اور دیکھائی بھی دے گی دوسری طرف پاکستان تحریک انصاف کے میاں اسلم اقبال کا کہنا ہے کہ اس حلقے کے لوگوں سے جینا مرنا ایک ساتھ ہے پی پی 151کے حلقے کی عوام کے دکھ اور سکھ کا ساتھی ہوں کبھی الیکشن کے حالات میں نہیں آیا بلکہ ہر وقت ان کے ساتھ کھڑا ہوتا ہوں ۔ مسلم لیگ(ن) کے رانا مشہود نے سبزہ زار کے بلاک جے ، بلاک این، بلاک ایم، بلاک 13، شاہ فرید چوک، سید پور سٹاپ، ڈھولنوال، کھاڑک نالہ سکیم موڑ سٹاپ ، یتیم خانہ چوک سمیت ملتان روڈ پر بھی اپنی کمپین کیلئے خاصے متحرک ہو چکے ہیں پاکستان تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ن) کے علاوہ باقی جماعتوں سے وابستہ سیاسی امیدواروں کی کمپین زیادہ اچھے طریقے سے دیکھائی نہیں دے رہی ہے مسلم لیگ (ن) کے ایم پی اے رانا مشہود کا دعویٰ ہے کہ پی پی 151حلقہ (ن) لیگ کا گڑھ ہے این اے 126اس دفعہ پاکستان تحریک انصاف کثیر ووٹوں کیساتھ فتح یاب ہو گی اور شیر دم دبا کر بھاگ جائے گا کیوں کہ ہر ایک کے ہاتھ میں اب بلا آئے گا۔مسلم لیگ (ن) کے ایم پی اے ، ایم این اے کے کارنامے، گلی گلی مشہور ہو چکے ہیں اب کی بار عوام دھوکہ نہیں کھائیں گے ایک دوسرے سے برتری کے دعوے صرف 2جماعتیں نہیں بلکہ تمام جماعتوں اور آزاد امیدواران کی حیثیت سے کھڑے ہونے والے افراد نے کیا ہے اب دیکھنا یہ ہے کہ پی پی 151حلقے کی عوام کے ساتھ وفا کرتی ہے اور کس کے ساتھ بے وفائی کرتی ہے یہ فیصلہ 25جولائی تک متوقع ہے۔

ووٹروں کی تواضع

مزید : علاقائی