جے یو آئی (ن) کا مدرسہ دارالعلوم سعدیہ کوٹھا میں تعزیتی اجلاس

جے یو آئی (ن) کا مدرسہ دارالعلوم سعدیہ کوٹھا میں تعزیتی اجلاس

ٹوپی ( نامہ نگار) جے یو ائی (ن) کا مدرسہ دارالعلوم سعدیہ کوٹھا میں تعزیتی اجلاس ، ہارون بلور اور دیگر پر خود کش حملے کی شدید مذمت، اجلاس میں امن و امان کے حوالہ سے صوبائی حکومت سے اپنی ذمہ داریاں پوری کرنے کا مطالبہ، مولانا خلیل احمد مخلص، تفصیل کے مطابق جے یو ائی (ن) کا ایک تعزیتی اجلاس مدرسہ درالعلوم سعدیہ کوٹھا میں جے یو ائی (ن) کے مرکزی امیر اور پی پی پی اور جے یو ائی (ن) کے NA18کے لئے مشترکہ امیدوار مولانا خلیل احمد مخلص کے زیر صدرات منعقد ہوا۔ جس میں جنرل سیکرٹری حاجی نجیم خان ایڈوکیٹ PK43جے یوائی (ن) کے امیدوار آصف کریم خان PK44کے پی پی پی اور جے یو ائی (ن) کے مشترکہ امیدوار طاہر تسلیم خان ، امیدوران PK کے نثار علی خان ، قاری لیطف شاکر، ضلعی امیر مفتی ریاض گل، جنرل سیکرٹری قاری عبد الرشید، ضلعی عہدیداران اور ممبران گل فراز خان، نظرمحمد خان، حضرت علی اور جاوید زمان سمیت مدرسہ کے طلباء اور اساتذہ کرام نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ اس موقع پر خلیل احمد مخلص نے اس واقع پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے شدید مذمت کی اور کہا کہ اسلام امن اور سلامتی اور پیار محبت کا دین ہے۔ اسلام کسی بھی شخص کو بے گناہ انسانوں کی ہلاکت کی اجازت نہیں دیتا۔ کیونکہ اسلام کی رو سے ایک بے گناہ انسا ن کی قتل ساری انسانیت کے قتل کے مترادف ہے۔ انہوں نے بلور خاندان اور خود کش حملے میں متاثرہ دیگر خانداوں کے ساتھ تعزیت کا اظہار کیا اور دعا کی کہ اللہ تعالیٰ شہدا ء کو اعلیٰ مقام نصیب فرمائیں اور زخمیوں کو جلد سے جلد صحت کاملہ نصیب فرمائیں۔ انہوں نے غمزدہ خاندانوں کے لئے صبر جمیل کی دعا ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر