قوم چاہتی ہے کہ 25 جولائی کو الیکشن ہو ، سلیکشن نہ ہو : سراج الحق

قوم چاہتی ہے کہ 25 جولائی کو الیکشن ہو ، سلیکشن نہ ہو : سراج الحق
 قوم چاہتی ہے کہ 25 جولائی کو الیکشن ہو ، سلیکشن نہ ہو : سراج الحق

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ قوم چاہتی ہے کہ 25 جولائی کو الیکشن ہو ، نگران حکومت کو الیکشن کا مینڈیٹ ملا ہے۔ اس کے کسی عمل سے لائیک اور ڈس لائیک کا تاثر نہیں ملنا چاہیے ۔

نجی ٹی وی چینل ’’دنیا نیوز ‘‘ کے مطابق امیر جماعت اسلامی  نے کہا ہے کہ قوم چاہتی ہے کہ 25 جولائی کو الیکشن ہو ، سلیکشن نہ ہو ۔ نگران حکومت کو الیکشن کا مینڈیٹ ملا ہے اس کے کسی عمل سے لائیک اور ڈس لائیک کا تاثر نہیں ملنا چاہیے ۔ الیکشن قوانین بالکل واضح ہیں ان سے ہٹ کر کوئی چیز قابل قبول نہیں ۔ الیکشن کے حوالے سے پائی جانے والے بے یقینی سے لگتاہے کہ لوگ 24 جولائی کو بھی پوچھ رہے ہوں گے کہ الیکشن ہوگا یا نہیں،پیپلز پارٹی ، مسلم لیگ اور پی ٹی آئی کی حقیقی متبادل ایم ایم اے ہے، 25 جولائی کا الیکشن نظریے اور تہذیبوں کے درمیان ہوگا ، ایک طرف اللہ والے اور دوسری طرف امریکہ والے ہیں، یہ غلامان ٹرمپ اور غلامان مصطفےٰ کے درمیان معرکہ ہے، اگر سیکولر اور لبرل قوتوں کے ساتھ امریکہ ہے تو منبر و محراب اور خانقاہوں کی سرپرستی ایم ایم اے کو حاصل ہے ، نظریہ پاکستان کی حفاظت کے لیے قوم کو پاکستان کا مطلب کیا لا الہ الا اللہ کے نعرے پر متحد ہونا پڑے گا، آئین  پاکستان  کی حفاظت کے لیے آنے والے انتخابات میں نظریہ پاکستان اور اسلام پر غیر متزلزل ایمان رکھنے والی قوتوں کی کامیابی ملک و قوم کے لیے زندگی اور موت کا مسئلہ ہے ۔

مزید : الیکشن /قومی