”میں نے عمران خان کا فون اٹھا یا تو اس میں۔۔۔“ریحام خان کو فون میں کیا ملا تھا ؟بالآخر ریحام خان نے پردہ اٹھا دیا ،شرمناک ترین بات کہہ دی

”میں نے عمران خان کا فون اٹھا یا تو اس میں۔۔۔“ریحام خان کو فون میں کیا ملا ...
”میں نے عمران خان کا فون اٹھا یا تو اس میں۔۔۔“ریحام خان کو فون میں کیا ملا تھا ؟بالآخر ریحام خان نے پردہ اٹھا دیا ،شرمناک ترین بات کہہ دی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان کی سابقہ اہلیہ کی کتاب منظر عام پر آگئی ہے جس میں انتہائی شرمناک الزامات عائد کیے گئے ہیں ۔اس کتاب میں عمران خان کے ایک موبائل کا بھی تذکرہ ہے جس پر ماضی میں تحریک انصاف کے رہنماﺅں نے کافی تنقید کی ۔اس موبائل کے حوالے سے ریحام خان نے اپنی کتاب میں تذکرہ کرتے لکھا کہ ایک رات پہلے میری عمران خان سے بہت لڑائی ہوئی اور اگلی صبح میں باتھ روم میں کھڑی تھی وہ باہر آئے اور کہا کہ گزشتہ رات جو ہو ا اس پر مجھے معاف کردو ،عمران خان کی جانب سے اس معافی پر مجھے دھچکا لگا ،اس وقت مجھے لگا کہ عمران خان کو حقیقت میں پچھتا وا ہوا ہے ۔اس وقت میں نے عمران خان نے جب مجھے گلے لگا یا تو میں نے سختی سے کہا کہ یہ ہینکی پینکی بند ہو جانی چاہیے ،آپ کو اپنے عمل درست کرنا ہو گا ،اب میرفون دو اور اس میں سے سب ڈیلیٹ کردو ۔عمران خان نے کہا کہ تمہارے پاس نیا فون آگیا ہے ،اپنا نمبر کسی کو نہ دینا ،ہم وائبر پر بات کیا کریں گے ۔عمران خان نے پرانے موبائل کے بارے میں کہا کہ وہ بہت سست ہو گیا ہے میں نے کہا ایک دن کے استعمال کے لیے دے دو ،ہم اسے دوسرے ماڈل کے ساتھ کل تبدیل کر لیں گے ۔عمران خان نے کہا کہ میرے بیگ میں سے اپنا فون لے لو اور میں نے وہاں سے موبائل لے لیا ۔پھر میں نے لندن جانے سے پہلے عمران خان سے ملاقات کی ،اس موقع پر عمران خان نے کہا کہ تم اب کیوں جا رہی ہو میں نے جواب دیا کہ کیوں نہ ہم ہفتے کو ملیں ،ہماری شادی کی پہلی سالگرہ ہے اس پر مجھے سرپرائز دو ،اس پر عمران خان نے کہا کہ وہاں میرے لڑکے ہیں میں کیسے ملوں گا تو میں نے کہا کہ ہم اکٹھے رات کا کھانا کھائیں گے اور پھر تم اپنے لڑکوں کے پاس چلے جانا ۔پھر میں گاڑی کی پچھلی سیٹ پر بیٹھ کر یوسف کے ساتھ ائیر پورٹ کے لیے چلی گئی ،راستے میں یوسف نے مجھے فون دیا جس پر میل باکس پہلے سے کھلا ہوا تھا جسے دیکھ کر میں دنگ رہ گئی اور اس تکلیف کو بیان نہیں کیا جا سکتا ۔ان میں سے ایک ای میل عمران خان اور لاہور میں ان کے حجام کے درمیان تھی ۔ایک اورای میل پیغامات میں عمران خان ایک خاتون سے کہہ رہے تھے کہ انہیں اس خاتون سے شادی کرنی چاہیے تھی ،ایک اور ای میل پیغام میں عمران خان ایسی خاتون سے بات کر رہے تھے جسے وہ ملے ہی نہیں ،عمران خان اس سے میرے ماضی کے بارے میں معلومات لے رہے تھے ۔ایک ای میل میں کئی ہفتوں سے پیغامات کا تبادلہ ہو رہا تھا جو عمران خان اور ان کی سابقہ گرل فرینڈ کرسٹین بیکر کے درمیا ن تھی ۔کرسٹین بیکر عمران خان کو بتا رہی تھی کہ میرے پہلے شوہر کے ساتھ معاملات طے پا گئے ہیں تاکہ مجھ پر حملے کرائے جا سکیں ۔میں نے یہ تمام ای میلز اپنے اکاﺅنٹ پر بھیج دیں اور اپنے بیٹے کو بھی بھیج دیں ۔پھر میں نے عمران خان سے رابطہ کیا تو آگے سے انہوں نے پیغام بھیجا جب چیزیں بہتر ہونے لگتی ہیں تو کچھ نہ کچھ ایسا ہو جاتا ہے ،ہم منحوس ہیں ،اس پر میں نے کہا تمہیں اللہ سے معافی مانگنی چاہیے ،میں واپس بنی گالا آرہی ہوں اور تمہیں یہ سب دکھاﺅں گی ۔پھر عمران خان نے پیغام بھیجا ایک دن میں تمہیں بتاﺅں گا کہ پچھلے دس مہینوں سے میں کن حالات سے گزر رہا ہوں ،لوگوں کی جانب سے تمہارے ماضی کے بارے میں جو باتیں سننے کو مل رہی ہیں ،میں بہت کنفیوز ہو گیا ہوں ،اور بہت ٹوٹچکا ہوں ۔میں تم سے پیار کرتا ہوں اور مجھے ہر اس چیز پر شک ہے جو تم نے مجھے بتا ئی ۔میں نے روحانی لوگوں سے رہنمائی ما نگی جس سے میں اور زیادہ کنفیوز ہو گیا ہوں ،میں پاگل ہو رہا ہوں ۔ 

مزید پڑھیں :’’میری شادی کی خبر سب سے پہلے پاک فوج کے لیے کام کرنے والی اس لڑکی نے لیک کی تھی۔۔۔‘‘

مزید : ڈیلی بائیٹس