صوابی،باپ بیٹے کو ایک سال قبل قتل کرنیوالا اجرتی قاتل گرفتار

صوابی،باپ بیٹے کو ایک سال قبل قتل کرنیوالا اجرتی قاتل گرفتار

صوابی(بیورورپورٹ)زیدہ ضلع صوابی کی پولیس نے ایک سال قبل قتل ہونے والے باپ بیٹے کے اندھے قتل کا سراغ لگا کر ملزم اجرتی قاتل کو ڈرامائی انداز میں گرفتار کر لیا اس سلسلے میں ایس پی انوسٹی گیشن خان خیل اور ایس ایچ او تھانہ زیدہ راز محمد خان نے ہنگامی پریس کانفرنس میں بتایا کہ ستائیس جولائی2018کی شب نامعلوم ملزما ن نے گھر کے اندر فائرنگ کر کے سبحان الدین اور اسکے بیس سالہ بیٹے سلمان کو نامعلوم افراد نے قتل کیا تھا مقتول کی بیوہ کی رپورٹ پر تھانہ زیدہ پولیس نے نامعلوم افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کر کے تفتیش شروع کردی ایس ایچ او تھانہ زیدہ راز محمد خان کی سر براہی میں تفتیشی ٹیم نے جدید خطوط پر اس اندھے کیس کو ٹریس کر لیا۔ایس پی انوسٹی گیشن خان خیل اور ایس ایچ او راز محمد نے بتایا کہ جدید خطوط پر تفتیش کے دوران اس اندھے قتل کا سراغ مل گیا اور کیس سے متعلق اہم شواہد اکٹھے کئے اس دوران اطلاع ملنے پر مردان کے علاقہ رستم کے بد نام زمانہ ٹارگٹ کلر افسر علی ولد شیبر خان کو صوابی کے ایک علاقے سے گرفتار کر لیا گیا دوران تفتیش ملزم افسر علی نے پولیس کو بتایا کہ دونوں باپ بیٹے کو قتل کرنے کے لئے شفیق ولد خلیق الزمان اور ذاکر ولد واصل خان نے پانچ لاکھ روپے بطور اجرت دینے کا وعدہ کیا اور اسی طرح ایک اور اجرتی قاتل ظہور ولد جرمن سکنہ جھنڈا صوابی کو بھی اتنی ہی رقم دیدی۔ انہوں نے مزید کہا کہ ملزم ذاکر کا مقتول سبحان الدین سے تین مرلہ زمین پر تنازغہ تھا اسلئے وہ سبحان الدین اور اس کے بیٹے سلمان کو ختم کرنا چاہتے تھے۔ گرفتار ملز م نے پولیس کو بتایا کہ وہ جھوٹے نہیں بول رہے ہیں اور مذکورہ بیان اپنی ضمیر کے آواز کے مطابق کسی دباؤ کے بغیر دے رہے ہیں ایس پی انوسٹی گیشن خان خیل خان نے بتایا کہ ڈی پی او صوابی سید خالد ہمدانی نے اس اندھے کیس سے متعلق اپنے ذرائع استعمال کئے اور اس کا نتیجہ آج سب کے سامنے ہیں انہوں نے کہا کہ صوابی پولیس انتہائی کم وسائل کے باوجود اپنی پیشہ ورانہ صلاحیتیں بروئے کار لا رہی ہے #

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...