پشاور، چارسدہ انجمن نانبائی ایسوسی ایشن کا ضلعی انتظامیہ کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

پشاور، چارسدہ انجمن نانبائی ایسوسی ایشن کا ضلعی انتظامیہ کیخلاف احتجاجی ...

پشاور(سٹی رپورٹر) انجمن نانبائی ایسوسی ایشن کا ضلعی انتظامیہ کی طرف سے روٹی قیمت مقرر نہ کرنے کے خلاف صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا ہے اور ضلع پشاور مین مکمل شٹر ڈاؤن ہڑتال تھی مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اور بینرز اٹھا رکھے تھے جس پر انتظامیہ کے خلاف نعرے درج تھے۔مظاہرے کی قیادت ایسوسی ایشن کے صوبائی صدر محمد اقبال اور صوبائی سیکرٹری رحیم صافی نے کی۔مظاہرین کا کہنا تھا کہ مہنگائی کی وجہ سے آٹے کی قیمت بڑھ جانے کے بعد روٹی کی قیمت مین بھی اضافہ ہونا چاہئے جبکہ اس سلسلے میں ضلعی حکومت کیساتھ 140 گرام روٹی کی قیمت 12 روپے پر آمادگی ظاہر کی تھی مگر انتظامیہ کی طرف سے کوئی العمیہ جاری نہیں کیا گیا تھا جبکہ ایسو سی ایشن نے ضلعی حکومت سے اس سلسلے میں مذاکرات کئے کہ روٹی کی قیمت کا تعین مشاورت سے کیا جائے تاکہ عوام کو موجود مشکل سے نکالا جا سکے۔انہوں نے نے ضلعی حکومت سے مطالبہ کیا مہنگائی کو سامنے رکھتے ہوئے 150 گرام روٹی کی قیمت 10 روپے سے بڑھاکر 15 روپے کی جائے بصورت دیگر احتجاج جاری رہنے کیساتھ دائرہ وسیع کیا جائے گا۔

چارسدہ (بیو رو رپورٹ) نانبائی ایسو سی ایشن کی ہڑتال کی وجہ سے عوام گو نا گوں مشکلات سے دو چار ہیں مگر حکومت ٹھس سے مس نہیں ہو رہی ہے۔آٹے کی بوری پہلے 3200 روپے میں جبکہ آج کل ریٹ 4800روپے ہے۔ سوئی گیس اور آٹے کے نرخوں میں ہو شربا اضافے کی وجہ سے نانبائی دس روپے میں روٹی فروخت نہیں کر سکتے۔ ان خیالات کا اظہار نانبائی ایسو سی ایشن کے صدر اقبال خان، عبداللہ، امان اللہ اور دیگرنے نانبائی ایسو سی ایشن کے منعقدہ اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے کیا۔ اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے مقررین نے کہا کہ 2017میں پرائس ریویو کمیٹی کے اجلاس میں 160گرام روٹی کی قیمت 10روپے مقرر کی گئی تھی جس کے بعد آج تک پرائس ریویو کمیٹی کا کوئی اجلاس منعقد نہیں ہو ا۔ انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے ڈپٹی کمشنر سے متعدد بار رابطہ کیا گیا مگر کوئی شنوائی نہیں ہوئی۔ انہوں نے واضح کیا کہ2017میں آٹے کی بوری 3200روپے کی ملتی تھی جبکہ آج کل 4800روپے کی مل رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ سوئی گیس اور دیگر اخراجات میں اضافے کی وجہ سے نانبائیوں کیلئے پرانے نرخوں پر روٹی فروخت کرنا مشکل ہے۔ انہوں نے اس امر پر افسوس کا اظہار کیا کہ ڈپٹی کمشنر اور ضلعی انتظامیہ پرائس ریویو کمیٹی کا اجلاس بلانے کی بجائے الٹا نانبائیوں پر بھاری جرمانے عائد کر رہے ہیں۔ اس موقع پر انہوں نے اعلان کیا کہ ہڑتال غیر معینہ مدت تک جاری رہے گا۔

مزید : صفحہ اول