”نان ٹیکس پیئرز کو ٹیکس نیٹ میں لانا ہے“ کئی دنوں بعد بالآخر گورنر سٹیٹ بینک نے بھی خاموشی توڑدی

”نان ٹیکس پیئرز کو ٹیکس نیٹ میں لانا ہے“ کئی دنوں بعد بالآخر گورنر سٹیٹ ...
”نان ٹیکس پیئرز کو ٹیکس نیٹ میں لانا ہے“ کئی دنوں بعد بالآخر گورنر سٹیٹ بینک نے بھی خاموشی توڑدی

  


اسلام آباد(ویب ڈیسک) گورنراسٹیٹ بینک رضا باقر نے کہا ہے کہ پاکستان کو اقتصادی اور معاشی چیلنجز کا سامنا ہے ایک سال بعد اکنامک نتائج دیکھنے کو ملیں گے، کرنٹ اکاﺅنٹ خسارہ 2ارب ڈالرز سے کم ہوکر ایک ارب ڈالرز ماہانہ پرآگیا، کفایت شعاری مہم شروع کردی ہے،نان ٹیکس پیئرز کو ٹیکس نیٹ میں لانا ہے۔جمعرات کو گورنراسٹیٹ بینک رضا باقر نے ظہرانے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو اقتصادی اور معاشی چیلنجز کا سامنا ہے ایک سال بعد اکنامک نتائج دیکھنے کو ملیں گے ، تاریخ میں کبھی اتنا کرنٹ اکاﺅنٹ خسارہ نہیں دیکھا، ایک وقت تھا جب پاکستان میں اتنا کرنٹ اکاﺅنٹ خسارہ نہیں تھا ، فارن ایکسچینج ریزرو خطرناک حد تک کم ہو چکے تھے ،کرنٹ اکاﺅنٹ خسارے پر بہت حد تک قابو پالیا گیا ہے ،حالات کے پیش نظر کفایت شعاری مہم شروع کی گئی ،وزیر اعظم عمران خان نے خود کفایت شعاری مہم کو لیڈ کیا اور شعور دیا،برآمدات کی صورتحال بھی کچھ بہتر نہیں ، پرائیویٹ سیکٹرز کو عالمی ایکسپورٹرز کے مقابلے میں لانا ہو گا،ایکسپورٹ سیکٹر کو گلوبل سیکٹر کی طرز پر اقدامات کر رہے ہیں ، تمام اسٹیک ہولڈرز کو اعتماد میںلیا جا رہا ہے۔ ٹیکس پیئرز کی حوصلہ افزائی ، نان ٹیکس پیئرز کو ٹیکس نیٹ میں لانا ہے۔ وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے ایف بی آر میں اصلاحات کی جا رہی ہیں۔ آئی ایم ایف کے ساتھ پاکستان کا معاہدہ کامیابی سے ہو چکا ہے۔ انٹر نیشنل کمیونٹی کے ساتھ بھی پارٹنر شپ پروگرام جاری ہیں۔ایف اے ٹی ایف سے نکلنے کیلئے جامع اقدامات کئے ہیں، ملک میں ٹیکس سسٹم کا شفاف نظام لانا چاہتے ہیں۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد