پولیس نے شہری کو میچ کے دوران برطانوی شہزادی کی تصاویر کھینچنے سے روک دیا، لیکن دراصل وہ کس کی تصویر لے رہا تھا؟ حقیقت جان کر آپ ہنسنے پر مجبور ہوجائیں گے

پولیس نے شہری کو میچ کے دوران برطانوی شہزادی کی تصاویر کھینچنے سے روک دیا، ...
پولیس نے شہری کو میچ کے دوران برطانوی شہزادی کی تصاویر کھینچنے سے روک دیا، لیکن دراصل وہ کس کی تصویر لے رہا تھا؟ حقیقت جان کر آپ ہنسنے پر مجبور ہوجائیں گے

  


لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) شہزادہ ہیری کے ساتھ شادی کرکے برطانوی شاہی خاندان کی فرد بننے والی ’شہزادی‘ میگھن مارکل گزشتہ دنوں ٹینس کے ایک میچ میں شریک ہوئیں جہاں ایک شائق نے ان کی تصویر بنانے کی کوشش کی مگر اسے شہزادی کے گارڈز نے روک دیا مگر حقیقت میں وہ شخص میگھن کی نہیں بلکہ ٹینس سٹار راجر فیڈررکی تصویر بنانے کی کوشش کر رہا تھا۔ میل آن لائن کے مطابق یہ 58سالہ حسن حسنوف نامی شائق تھا جس نے سیلفی بنانے کی کوشش کی۔ جب اسے شہزادی کے گارڈز نے روکا تو وہ حیران رہ گیا۔

بعدازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے حسن حسنوف کا کہنا تھا کہ ”مجھے تو معلوم ہی نہیں تھا کہ وہاں شہزادی میگھن مارکل بھی موجود ہے۔ میری نظریں تو راجر فیڈرر پر تھیں اور میں انہی کے ساتھ سیلفی لینے کی کوشش کر رہا تھا۔ ” حسن کا کہنا تھا کہ ”جیسے ہی میں نے اپنے آئی فون سے سیلفی بنانے کی کوشش کی، میگھن مارکل کی سکیورٹی ٹیم کے لوگ میرے پاس آئے اور مجھے کہا کہ شہزادی یہاں نجی حیثیت میں آئی ہوئی ہیں، لہٰذا ان کی تصویر مت بناﺅ۔ ان کے کہنے پر جب میں نے دیکھا تو وہاں میگھن بھی موجود تھیں جو میرے بالکل سامنے بیٹھی ہوئی تھیں۔ میں نے میگھن کے گارڈز کو اپنا فون دکھایا جس کا سیلفی کیمرا آن تھا اور انہیں کہا کہ میگھن میرے سامنے بیٹھی ہیں مگر میں اپنے پیچھے بیٹھے راجر فیڈرر کو پس منظر میں لے کر سیلفی بنا رہا ہوں۔ اس کے باوجود انہوں نے مجھے سیلفی بنانے سے روک دیا۔“

مزید : برطانیہ


loading...