اشتہاروں میں کمیشن مانگنے پر ہٹائے گئے اجمل وزیر میدان میں آگئے

اشتہاروں میں کمیشن مانگنے پر ہٹائے گئے اجمل وزیر میدان میں آگئے
اشتہاروں میں کمیشن مانگنے پر ہٹائے گئے اجمل وزیر میدان میں آگئے

  

پشاور (ڈیلی پاکستان آن لائن) خیبر پختونخوا کے سابق مشیر اطلاعات اجمل وزیر نے خود سے منسوب آڈیو کو جعلی قراردے دیا اور کہا ہے کہ اس ٹیپ میں جن معاملات کی بات کی گئی ہے وہ تو ان کے دائرہ اختیار سے ہی باہر تھے۔

ہفتہ کے روز اجمل وزیر کو ایک آڈیو ٹیپ سامنے آنے کے بعد عہدے سے ہٹادیا گیا تھا۔ اس ٹیپ میں انہیں مبینہ طور پر ایک اشتہاری کمپنی کے مالک سے سرکاری اشتہار میں کمیشن مانگتے ہوئے سنا گیا۔

عہدے سے ہٹائے جانے کے بعد اپنے رد عمل میں اجمل وزیر نے کہا کہ ان کی مختلف اجلاسوں اور بریفنگز میں کہی گئی باتوں کو ملا کر من گھڑت آڈیو بنائی گئی ہے۔ اشتہار محکمہ صحت کا تھا جس کا چیئرمین وزیر صحت ہوتا ہے، کمیٹی میں وہ تو اعزازی ممبر تھے ان کے پاس فیصلے کا اختیار ہی نہیں تھا۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کا ویژن ہے جس پر الزامات ہوں گے وہ جوابدہ ہو گا، جو اختیارات میرے پاس نہیں،آڈیو میں ان کی بات ہو رہی ہے۔ اپنے خلاف سازش کرنے والوں کو جلد بےنقاب کروں گا۔

مزید :

علاقائی -خیبرپختون خواہ -پشاور -