اورنج ٹرین چلا کر سابقہ حکومتوں کے منصوبے بند کرنیکی روایت ختم کر رہے ہیں:عثمان بزدار

اورنج ٹرین چلا کر سابقہ حکومتوں کے منصوبے بند کرنیکی روایت ختم کر رہے ...

  

لاہور(خصوصی رپورٹ)وزیراعلیٰ پنجاب سردارعثمان بزدار نے ڈیرہ گجراں میں اورنج لائن میٹروٹرین سٹیشن کا اچانک دورہ کیا اور ٹرین سروس کے آغاز کیلئے تیاریوں کاجائزہ لیا -وزیراعلیٰ نے اورنج لائن میٹرو ٹرین پر موجود جدید ترین سہولتوں، آٹومیٹک آلات اور مختلف شعبوں کا بھی معائنہ کیا-ایم ڈی پنجاب ماس ٹرانزٹ اتھارٹی نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار کو پراجیکٹ کی موجودہ صورتحال کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی -وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اورنج لائن ٹرین کو جلد ازجلدفنکشنل کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ اورنج لائن میٹرو ٹرین سی پی پیک کا منصوبہ ہے، اورنج لائن میٹروٹرین کا تعمیراتی کام تقریباً مکمل ہوچکا ہے،سازگار حالات کا انتظار کررہے ہیں،کورونا کی وجہ سے پیدا ہونے والی رکاوٹیں دور ہوتے ہی ٹرین سروس کا باقاعدہ آغاز کردیا جائے گا-وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہاکہ اورنج لائن ٹرین چلا کر سابقہ حکومتوں کے منصوبے بند کرنے کی روایت کا خاتمہ کررہے ہیں - عوام کی فلاح او رسہولت کے لئے میٹرو ٹرین چلارہے ہیں -لاہور کے شہریوں کو سفر کی بہترین سہولتیں فراہم کرنے کا اہتمام کررہے ہیں -انہوں نے بتایاکہ اورنج لائن میٹروٹرین مسافروں کے تحفظ کے لئے ایس او پیز کے تحت چلانے کا فیصلہ کیاگیاہے تاکہ مسافروں کی صحت کے تحفظ کو یقینی بنایا جاسکے-ایم ڈی ماس ٹرانزٹ اتھارٹی نے وزیراعلی کو اورنج لائن ٹرین کو فنکشنل کرنے کے لئے اقدامات پر پیشرفت سے آگاہ کیااور بتایاکہ اورنج لائن ٹرین کا الیکٹریکل،مکینیکل او رسول ورک مکمل ہو چکا ہے -ٹرین کو آپریشنل کرنے کے لئے نورینکو، جی ایم جی، ڈائیوو او رجے وی پر مشتمل چین کے اداروں کے ماہرین اور اہلکاروں کی خدمات حاصل کی جارہی ہیں - کورونا کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورتحال بہترہوتے ہی ٹرین کو فنکشنل کردیا جائے گا-وزیراعلیٰ نے دیگرتمام متعلقہ حکام کو ٹرین سروس کے آغاز کے لئے ممکنہ اقدامات جلد ازجلد مکمل کرنے کی ہدایت کی-سیکرٹری ٹرانسپورٹ، ڈی جی ایل ڈی اے، چیف انجینئر ایل ڈی اے، ڈپٹی کمشنر لاہور ڈویژن، جی ایم پی ایم اے، ایم ڈی نیسپاک اور دیگر متعلقہ حکام بھی اس موقع پر موجود تھے - بزدار حکومت صدقات و عطیات جمع کرنے کے نظام کی نگرانی اورفنڈز کی ترسیل کے عمل میں شفافیت یقینی بنانے کے لئے محکمانہ اصلاحات لارہی ہے-وزیراعلیٰ سردار عثمان بزدار کی ہدایات پر پنجاب چیریٹی ایکٹ 2018کے تحت پنجاب چیریٹی کمیشن قائم کر دیا ہے- وزیراعلیٰ عثمان بزدار کا کہناہے کہ صدقات و عطیات کا درست استعمال یقینی بنانے کے لئے صوبے بھر میں کام کرنے والی خیراتی تنظیموں اور اداروں کے لئے 15 اگست سے پہلے پنجاب چیریٹی کمیشن سے رجسٹریشن کرانالازم ہوگا-این جی اوز، ٹرسٹ، سوسائٹیزاور دیگر خیراتی اداروں کی آسانی کے لئے ویب رجسٹریشن پورٹل بھی بنایا گیاہے-یہ پورٹل پنجاب میں ای گورننس کے فروغ اور خدمات کی ایک کلک پر رسائی یقینی بنانے کی کڑی ہے- www.charitycommission.punjab.gov.pk پر وزٹ کر کے درخواست کنندہ اپنی رجسٹریشن کروا سکتے ہیں - وزیراعلیٰ نے کہاکہ پاکستان کے لوگوں کا دوسروں کی مدد او رچیریٹی کا جذبہ بے مثال ہے-کوویڈ19سے معاشی طور پر متاثرہ بہن بھائیوں کی مدد کے لئے بھی صاحب حیثیت افراد نے دل کھول کر مدد کی ہے-انہوں نے کہاکہ چیریٹی کمیشن کے قیام سے کمزور طبقات کی مدد کے لئے جمع مالی ا مداد کا حساب رکھا جا سکے گااور اس اقدام سے خیراتی رقوم میں خرد برد یا اس کا ناجائز استعمال روکا جا سکے گا-

مزید :

صفحہ اول -