ہاؤسنگ سیکٹر کو مراعات دینے سے ہزاروں لوگوں کو روزگار ملے گا:لاہور ڈویلپرز اینڈ بلڈر ایسوسی ایشن

ہاؤسنگ سیکٹر کو مراعات دینے سے ہزاروں لوگوں کو روزگار ملے گا:لاہور ڈویلپرز ...

  

لاہور (رپورٹ،میاں اشفاق انجم) لاہور ڈویلپرز اینڈ بلڈر ایسوسی ایشن کی طرف سے ہاؤسنگ سیکٹرکیلئے مراعات کے اعلان کا خیر مقدم، تعمیراتی شعبہ کیلئے انقلابی اقدامات ہیں، ہزاروں لوگوں کو روزگار ملے گا،مکان بنانے کیلئے ایمنسٹی دینا خوش آئند ہے، بہترین نتائج کے لئے ایمنسٹی کی میعاد 31 دسمبر 2021ء تک بڑھائی جائے، پرائیویٹ ہاؤسنگ سکیم کا کردار بڑا اہم ہے، ہاؤسنگ سکیم کی منظوری کے لئے شرائط آسان کرنے کی ضرورت ہے،50 لاکھ گھروں کے خواب کو شرمندہ تعبیر کرنے کیلئے ڈویلپرز اور بلڈر کو مشاورت کا حصہ بنایا جائے، سرکاری اداروں کی طرف سے پرائیویٹ منصوبوں کی منظوری مشکل بنا دی گئی ہے،ون ونڈو نظام لایا جائے۔ ان خیالات کا اظہار لاہور ڈویلپرز اینڈ بلڈر ایسوسی ایشن کے چیئرمین میاں طاہر جاوید، صدر شیخ امجد، شیخ صوفی ادریس، سردار عادل عمر، شاہد بٹ،یاسر قاضی، چودھری طارق سندھو، ملک زاہد مصطفی، عامر حسین فدا نے روزنامہ ”پاکستان“ سے وزیراعظم کے تعمیراتی پیکیج کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ چیئرمین میاں طاہر جاوید نے وزیراعظم کے پیکیج کو انقلابی پیکیج قرار دیتے ہوئے کہا اس سے ہزاروں افراد کو روزگار ملے گا۔ صدر شیخ امجد نے گھر بنانے کے حوالے سے ایمنسٹی دیئے جانے کو تاریخی قدم قرار دیا ہے۔ یاسر قاضی نے گھر بنانے کی سکیم میں بنکوں کو شامل کرنے کے اقدام کا خیر مقدم کیا ہے۔شیخ ادریس نے ایمنسٹی سکیم کی میعاد31دسمبر 2021ء تک توسیع دینے کا مطالبہ کیا ہے۔عامر حسین فدا نے کہا ہے ہاؤسنگ سکیم کے نمائندوں کو ان بورڈ لینے کی ضرورت ہے۔ ملک زاہد مصطفی نے کہا ہے کہ وزیراعظم کا اعلان50لاکھ گھروں کے خواب کو شرمندہ تعبیرکرے گا۔ شاہد بٹ نے کہا ہے ہاؤسنگ سکیم کی منظوری کے لئے ون ونڈو بنانے کی ضرورت ہے۔ طارق سندھو نے کہا ہے تعمیراتی شعبہ میں استعمال ہونے والی اشیاء کی قیمتوں میں کمی کی جائے۔ ڈی سی ریٹس کم کیے جائیں۔

ڈویلپرز اور بلڈر

مزید :

صفحہ آخر -