جماعت اسلامی ضلع مر دا ن کے مجلس شوریٰ کا اجلاس،انتخابات کا جائزہ لیا گیا

  جماعت اسلامی ضلع مر دا ن کے مجلس شوریٰ کا اجلاس،انتخابات کا جائزہ لیا گیا

  

مردان(بیوروپورٹ) جماعت اسلامی ضلع مر دا ن کے مجلس شوریٰ کا اجلاس امیر ضلع مولانا سلطان محمد کی صدارت میں ہوا۔ اجلاس میں کرونا سے پیدا شدہ صورتحال اور الخدمت فاونڈیشن کی کارکردگی کا جائزہ لیا گیا۔ مجلس میں موجود تمام شرکا نے الخدمت فاونڈیشن کی سرگرمیوں کو زبردست خراج تحسین پیش کی۔ اس موقع پر آئندہ کیلئے منصوبہ بندی کی گئی۔ ضلعی ترجمان عماداکبرحسان نے اجلاس کے بعد میڈیا کو بتایا کہ اجلاس میں مختلف تنظیمی امور پر گفتگو ہوئی اور بلدیاتی انتخابات کے لئے تیاریوں کے حوالے سے بھی جائزہ لیا گیا۔ اس موقع پر مختلف کمیٹیاں تشکیل دی گئی جو کہ آئندہ چند روز میں سیاسی امور پر اپنی تجاویز پیش کرے گی۔ اجلاس سے خطا ب کرتے ہوئے ضلعی امیر نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت آٹاچوروں اور چینی چوروں کی سرپرستی کر رہی ہے۔ سکھوں اور قادیانیوں کے بعد اب ہندوں کو خوش کرنے کیلئے مندر کی تعمیر کا اعلان تو ہوا لیکن غریب عوام کیلئے پچاس لاکھ گھر اب بھی خواب کے سوا کچھ نہیں۔ انہوں نے واضح کیا کہ اسلام آباد میں نئے مندر کی تعمیر کی اجازت نہیں دیں گے۔ شوریٰ اجلاس میں جماعت اسلامی کی جانب سے قومی اسمبلی میں مندر کی خلاف قرارداد پیش کرنے پر ممبر قومی اسمبلی عبدالاکبر چترالی کو خراج تحسین پیش کیا گیا۔ مولانا سلطان محمد نے کہا مودی کو خوش کرنے کیلئے تحریک انصاف مسلم لیگ پیپلزپارٹی اور عوامی نیشنل پارٹی ایک پیج پر ہیں۔ یہ سیکولرلوگ ہیں اور اپنے لاکھوں اختلافات کے باوجود اسلام کے خلاف مکمل متفق ہوتے ہیں۔ عوام دیگر پارٹیوں کی طرح تحریک انصاف کو بھی مسترد کرتی ہے۔ آئندہ مستقبل جماعت اسلامی کا ہے۔ عوام جماعت کو سپورٹ کریں۔ اجلاس میں جماعت اسلامی کے سابق امیر سیدمنور حسن کے لئے دعائے مغفرت کی گئی اور اس کی رحلت کو عظیم سانحہ قرار دیا گیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -