پی ٹی آئی حکومت کی کشتی آئندہ چھ ماہ میں ڈوبنے والی ہے:سینیٹر سراج الحق

پی ٹی آئی حکومت کی کشتی آئندہ چھ ماہ میں ڈوبنے والی ہے:سینیٹر سراج الحق

  

لوئر دیر (نامہ نگار) امیرجماعت اسلامی پاکستان سنیٹر سراج الحق نے موجودہ حکومت کو انگلی پر چلنے والی حکومت قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت کی کشتی آئندہ چھ ماہ میں ڈوبنے والی ہے۔ عمران خان، پیپلز پارٹی، مسلم لیگ ن اور ڈیکٹیٹر پرویز مشرف کی تسلسل ہے جلدہی اپنی انجام کو پہنچنے والے ہیں۔ ملک میں ایک حقیقی تبدیلی کیلئے جماعت اسلامی نے عوامی رابطہ مہم کا آغاز کر دیا ہے۔ وفاقی اور صوبائی بجٹ میں ملاکنڈ ڈویژن کیلئے کوئی میگا پراجیکٹ نہیں رکھا گیا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے جماعت اسلامی کے مرکزی دفتر احیاء العلوم بلامبٹ میں تحصیل بلامبٹ اور تیمرگرہ کے کارکنوں اور بعد ازاں پریس کانفرنس سے خطاب کے دوران کیا اس موقع پر دوسروں کے علاوہ جماعت اسلامی کے ضلعی امیر اعزازالملک افکاری، سابق ممبر قومی اسمبلی صاحبزادہ محمد یعقوب خان، سابق صوبائی وزیر خزانہ مظفر سید ایڈوکیٹ، جے آئی کے جنرل سیکرٹری ارشد زمان، سابق ڈسٹرکٹ ناظم حاجی محمد رسول خان اور تحصیل بلامبٹ کے امیر عمران الدین ایڈوکیٹ بھی موجو د تھے، سینیٹر سراج الحق کا کہنا تھا کہ امریکہ سمیت پوری دنیا نے پی آئی اے پر پابندی عائد کردی۔ حکومت نے خود پی آئی اے کو بدنام کرکے وعدہ معاف گواہ بن گئی۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت میں 22 کروڑ عوام پریشان اور بڑی مشکلات سے دوچار ہیں۔ حکومت سورہی ہے۔ آپس کی لڑائیاں ہورہی ہیں۔ معیشت کو آئی ایم ایف کے حوالے کیا گیاہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے خود اعتراف کر لیا ہے کہ وہ اپنے اقتدار کے پانچ سال مکمل نہیں کر سکتے اور جس نے ان کو انگلی سے پکڑ کر لائے ہیں وہ خود تشویش میں مبتلا ہیں۔ سیراج الحق کا کہنا تھا کہ گزشتہ 22مہینوں میں قومی اسمبلی میں ملک کی ترقی اور استحکام کیلئے کوئی قانون سازی نہیں کی گئی بلکہ پی ٹی آئی کے ممبران اسمبلی نے نئے گالی گلوچ کے الفاظ ایجاد کئے اور ماں بہن کو بھی معاف نہیں کیا۔ جماعت اسلامی کے مرکزی امیر نے حکومت پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اس نا اہل حکومت میں عوام کو پٹرول اور ہسپتال میں ڈسپرین گولی تک نہیں مل رہی ملک کو آئی ایم ایف کے غلام بنا دیا گیا ہے۔ آئے روز بیورو کریسی میں تبدیلی اس بات کی غمازی ہے کہ حکومت ناکام ہو چکی ہے اور آئندہ چھ ماہ میں پی ٹی آئی کی کشتی ڈوبنے والی ہے۔سیرا ج الحق نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ جماعت اسلامی ملک میں کبھی بھی صدارتی حکومت کی حمایت نہیں بلکہ اسلامی نظام حکومت حمایت کرے گی۔ انہوں نے کورونا وبا ء میں شہید ہونے والے افراد کو خراج عقیدت پیش کی اور لواحقین کو یقین دلایا کہ مشکل کی گھڑی میں جماعت اسلامی اور الخدمت فاؤنڈیشن ان کے ساتھ ہر قسم تعاؤن جاری رکھے گی، مدینہ کی ریاست کے بلند و بالا دعوے کرنے والی پی ٹی آئی کی حکومت میں کرپشن اور بے انصافی کا بول با لا ہے اور ناجائز کام کو چھوڑ کر جائز کام میں کرپشن عروج پر ہے حکومت نے کورونا وباء کے نام پر سود کا قرضہ لے کر ملک کی معیشت تباہی کے دہانے پر کھڑا کر دیا ہے۔ سراج الحق نے کرپشن میں ملوث ہونے پر صوبائی مشیر اطلاعات اجمل وزیرکو ہٹانے پر کہا کہ پی ٹی آئی کا سارا ٹبر ہی چور ہے ان سے خیر کی توقع نہیں۔ملک پر غیر سنجیدہ ٹولہ مسلط ہے۔ نیا پاکستان کا خواب دیکھنے والے تحریک انصاف کے کارکن اب کسی کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہے۔

مزید :

صفحہ اول -