چین بیرون ملک دنیا کا دوسرا بڑا سرمایہ کار بن گیا

چین بیرون ملک دنیا کا دوسرا بڑا سرمایہ کار بن گیا

اسلام آباد (این این آئی)ایک رپورٹ میں بتایاگیا ہے کہ چین 2016ء میں پہلی مرتبہ باہر کی جانیوالی غیر ملکی براہ راست سرمایہ کاری کرنے والا دنیا کا دوسرا سب سے بڑا ملک بن گیا ہے،عالمی سرمایہ کاری رپورٹ 2017ء کے مطابق چین سے باہر کی جانیوالی ایف ڈی آئی گذشتہ سال 44فیصد سالانہ کے اضافے سے 193بلین ڈالر ہو گئی ہے۔یہ اضافہ غیر ملکی فرموں کی طرف سے خریداری اور کراس بارڈ ر کے ادغام کی وجہ سے ہوا ہے ، یہ رپورٹ تجارت اور ترقی کے بارے میں اقوام متحدہ کی کانفرنس اور وزارت تجارت کے تحت چین کی بین الاقوامی تجارت و اقتصادی تعاون اکادمی نے مشترکہ طورپر جاری کی ۔امریکہ دنیا بھر میں سب سے بڑا سرمایہ کار ملک رہا جبکہ نیدر لینڈ تیسرے نمبر پررہا ، 2016ء میں چین کی باہر کی جانیوالی ایف ڈی آئی اس کی ملک میں کی جانیوالی سرمایہ کاری کی مقدار سے 36فیصد زیادہ تھی ، چین کم ترقی پذیر ممالک میں سرمایہ کاری کرنیوالا سب سے بڑا ملک رہا اور اس ضمن میں فرانس اور امریکہ سے کہیں آگے تھے ۔ترقی پذیر ایشیاء میں کی جانیوالی ایف ڈی آئی میں 15فیصد کمی کے باوجود چین 2016ء میں امریکہ اور برطانیہ کے بعد تیسرا سب سے بڑا سرمایہ وصول کرنے والا ملک رہا ،اور کی جانیوالی سرمایہ کاری ایک فیصد سالانہ کی کمی سے 134بلین ڈالر رہی ۔عالمی سطح پر ایف ڈی آئی کی آمد 2016ء میں دو فیصد کی کمی سے 1.75ٹریلین ڈالر رہی ۔

رپورٹ میں پیش گوئی کی گئی ہے کہ 2017ء کیلئے عالمی ایف ڈی آئی میں معمولی بحالی ہو گی اور توقع ہے کہ پانچ فیصد کے اضافے سے 1.8ٹریلین ڈالر کی سرمایہ کاری کی جائیگی ۔

مزید : کامرس