کڈنی سنٹر ملازمین سے مال وصولی ‘ سی ای او ہیلتھ کا انکوائری میں شامل ہونے سے انکار

  کڈنی سنٹر ملازمین سے مال وصولی ‘ سی ای او ہیلتھ کا انکوائری میں شامل ہونے ...

  

ملتان( وقائع نگار ) کڈنی سنٹر ملازمین سے لاکھوں روپے وصول کرکے ہڑپ کرنے والا چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی ملتان انکوائری کے لیئے تین بار بلوانے کے باوجود پیش نہیں ہوئے جبکہ ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز ملتان ڈویثرن نے رواں ہفتہ میں انکوائری مکمل کرکے لاہور بھیجوا(بقیہ نمبر38صفحہ7پر )

 فیصلہ کیا ہے۔معلوم ہوا ہے کہ کڈنی سنٹر ملتان ملازمین نے سروس کو ایڈھاک سے کنٹرکٹ پر تبدیل کرنے کے عوض اٹھارہ لاکھ روپے مبینہ رشوت چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈسٹرکٹ اتھارٹی ہیلتھ ڈاکٹر منور عباس کو دی۔کام نہ ہونے کی صورت میں مذکورہ ملازمین نے صوبائی سیکرٹری صحت کو تحریری درخواست دی۔جس پر ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز ملتان ڈویثرن ڈاکٹر شاہد بخاری کو مقرر کیا گیا۔انکوائری افسر نے بسلسلہ انکوائری تین بار سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر منور عباس کو انکوائری میں شامل ہونے کا کہا۔اس بابت حکمنامہ بھی بھیجا بھی گیا۔مگر اس کے باوجود سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر منور عباس انکوائری میں جان بوجھ کر شامل نہیں ہوئے۔ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ ڈاکٹر شاہد بخاری رواں ہفتہ کے دوران کسی بھی دن انکوائری مکمل کرکے اسکی رپورٹ سیکرٹری ہیلتھ کو بھیجوا دیں گے۔

رپورٹ بھجوائے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -