اصغر خان کیس، ایف آئی اے کی سربمہر تفصیلی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع

اصغر خان کیس، ایف آئی اے کی سربمہر تفصیلی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع
اصغر خان کیس، ایف آئی اے کی سربمہر تفصیلی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ آف پاکستان میں اصغر خان کیس میں ایف آئی اے نے سربمہر تفصیلی رپورٹ جمع کرادی، عدالت نے ریمارکس دیئے ہیں کہ سپریم کورٹ نے آرمی افسران کا معاملہ آرمی ایکٹ کے تحت ریفر کرنے کا حکم دیا تھا،کیس میں کئی اہم سوالات سامنے آئے ہیں،حکومت اپنا موقف پیش کرے۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں اصغر خان کیس کی سماعت ہوئی ،جسٹس عظمت سعید کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی ،وکیل ایف آئی اے نے کہا کہ ایف آ ئی اے کی جانب سے سربمہر تفصیلی رپورٹ جمع کرادی گئی ہے،جسٹس یحییٰ افریدی نے کہا کہ سپریم کورٹ کا 25 ستمبر کا ایک حکم نامہ ہے،سپریم کورٹ حکم کے مطابق کیا کیس ملٹری اتھارٹیزکو بھیجا گیا،کیس کس تاریخ کو بھیجا گیا تفصیل فراہم کریں۔

جسٹس عظمت سعید نے کہا کہ دیکھنا ہے کہ کیا آرمی ایکٹ کے تحت کیس بھیجا گیا یا نہیں،عدالت نے کہا کہ سپریم کورٹ نے آرمی افسران کا معاملہ آرمی ایکٹ کے تحت ریفر کرنے کا حکم دیا تھا،کیس میں کئی اہم سوالات سامنے آئے ہیں،حکومت اپنا موقف پیش کرے،عدالت نے کیس کی سماعت غیرمعینہ مدت تک ملتوی کردی۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد