ن لیگ نے گزشتہ دور حکومت میں 4 بار ٹیکس ایمنسٹی سکیم دی لیکن اس کا فائدہ کیا ہوا؟ نجم سیٹھی کا حیران کن انکشاف

ن لیگ نے گزشتہ دور حکومت میں 4 بار ٹیکس ایمنسٹی سکیم دی لیکن اس کا فائدہ کیا ...
ن لیگ نے گزشتہ دور حکومت میں 4 بار ٹیکس ایمنسٹی سکیم دی لیکن اس کا فائدہ کیا ہوا؟ نجم سیٹھی کا حیران کن انکشاف

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) سینئر صحافی و تجزیہ کار نجم سیٹھی نے انکشاف کیا ہے کہ ن لیگ اپنے گزشتہ دور حکومت میں 4 بار ٹیکس ایمنسٹی سکیم دے چکی ہے لیکن چاروں بار مطلوبہ اہداف حاصل نہیں کیے جاسکے۔ خیال رہے کہ تحریک انصاف کی حکومت نے بھی ٹیکس ایمنسٹی سکیم کا اعلان کر رکھا ہے جو 30 جون کو ختم ہوجائے گی۔

نجی ٹی وی 24 نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے نجم سیٹھی نے کہا کہ ن لیگ نے 2013سے 2018 کے اپنے دور حکومت میں 4 ٹیکس ایمنسٹی سکیمیں دیں۔ ن لیگ نے پہلی ٹیکس ایمنسٹی سکیم 2014 میں دی جو صنعتکاروں اور انڈسٹریز کیلئے آئی۔ حکومت نے اس سکیم کے تحت کالا دھن سفید کرنے کیلئے ڈھائی سال کا وقت دیا اور نواز شریف نے وعدہ کیا کہ اگر صنعتکار کالا دھن سفید کریں گے تو ان کی پرانی فائلیں نہیں کھنگالی جائیں گی لیکن اس سکیم کا ملک کو خاطر خواہ فائدہ نہیں ہوا۔

ن لیگ دور میں دوسری ایمنسٹی سکیم صرف دکانداروں اور تاجروں کیلئے 2016 میں آئی جس میں اسحاق ڈار نے وعدہ کیا تھا کہ 10 لاکھ لوگوں کو ٹیکس نیٹ میں لایا جائے گا لیکن اس سکیم کے تحت 9 ہزار 24لوگ ٹیکس نیٹ میں آئے اور ان سے ساڑھے 8 کروڑ روپے اکٹھے ہوئے ۔

نجم سیٹھی نے بتایا کہ رئیل اسٹیٹ والوں کیلئے بھی ٹیکس ایمنسٹی سکیم لائی گئی لیکن اس کا بھی کوئی فائدہ نہیں ہوا۔ نان فائلرز کیلئے ن لیگ کی حکومت جانے سے پہلے چوتھی ٹیکس ایمنسٹی سکیم آئی اور اس سکیم میں حکومت نے یہ پابندی عائد کردی کہ یہ سکیم صرف نان فائلرز کیلئے ہوگی، یہ سکیم 2 مہینے کیلئے آئی تھی لیکن اس سے بھی کوئی فائدہ نہیں ہوا۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور