پی سی بی کو مصباح اور یونس کی شراکت سے بہتری کی امید

پی سی بی کو مصباح اور یونس کی شراکت سے بہتری کی امید

  

لاہور(سپورٹس رپورٹر) پی سی بی نے دورہ انگلینڈ کے لیے مصباح اور یونس خان کی شراکت سے کارکردگی میں بہتری کی امیدیں وابستہ کرلیں۔2010 میں مصباح الحق کے قومی ٹیم کے کپتان بننے کے بعد پاکستان کی جیت میں اہم کردار ادا کرنے والی جوڑی اب ایک نئے کردار میں پاکستان کرکٹ سے منسلک ہوئی ہے، کرکٹ کو خیر باد کہنے کے بعد اب دونوں ایک ساتھ ڈریسنگ روم میں نوجوان کھلاڑیوں کی تربیت کے لیے موجود ہوں گے سابق کپتان مصباح الحق اور یونس خان نے ٹیسٹ کرکٹ کی 53 اننگز میں ایک ساتھ بیٹنگ کرتے ہوئے 3 ہزار 213 رنز بنائے، 15 بار سنچریاں اور 7 بار نصف سنچریوں کی شراکت قائم کی۔ پاکستانی ٹیم انگلینڈ میں تین ٹیسٹ اور تین ٹی ٹوئنٹی میچز کھیلنے کے لیے تین ہفتوں بعد انگلینڈ روانہ ہورہی ہے۔اپنے کرکٹ کیرئیر کے دوران مصباح الحق اور یونس خان کی کامیاب جوڑی نے پاکستان کوٹیسٹ کرکٹ میں کئی اہم فتوحات دلائیں۔ 2010 میں مصباح الحق کے قیادت سنبھالنے کے بعد سے پاکستان کی جیت میں اہم کردار ادا کرنے والی جوڑی اب ایک نئے کردار میں پاکستان کرکٹ سے منسلک ہوئی ہیں۔دونوں کھلاڑیوں نے ٹیسٹ کرکٹ کی 53 اننگز میں ایک ساتھ بیٹنگ کی۔ جہاں انہوں نیمشترکہ طور پر 70 سے کچھ کم اسٹرائیک ریٹ کیساتھ 3213 رنز بٹورے۔اس دوران دونوں کھلاڑیوں نے پاکستان کے لیے 15 مرتبہ سنچریوں اور 7 مرتبہ نصف سنچریوں پر مشتمل شراکت قائم کی۔مصباح اور یونس کی جوڑی نے انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ بھی ایک ساتھ ہی لی۔ دونوں نے اپنا آخری ٹیسٹ میچ ڈومانیکا میں کھیلا۔ میچ میں 101 رنز سے کامیابی نے پاکستان کو ویسٹ انڈیز میں پہلی ٹیسٹ سیریز جیتنے میں مدد کی۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -