تیل کی مصنوعی قلت کی ذمہ دارچند مارکیٹنگ کمپنیاں ہیں، پٹرولیم ڈویژن

    تیل کی مصنوعی قلت کی ذمہ دارچند مارکیٹنگ کمپنیاں ہیں، پٹرولیم ڈویژن

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) پٹرولیم ڈویژن کے ترجمان نے کہا ہے کہ ملک میں جاری پٹرول بحران کی ذمہ دار کچھ منافع خورآئل مارکیٹنگ کمپنیاں اور ان کے ڈیلر ہیں جن کی وجہ سے قلت ہوئی اور اس کا منفی اثر عام لوگوں کی زندگیوں پر پڑا ہے۔ترجمان نے پٹرول بحران پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ پیٹرولیم ڈویژن، آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی اور صوبائی حکومتوں سمیت تمام متعلقہ سٹیک ہولڈرز مشترکہ طور پر ملک بھر میں ایندھن کی فراہمی کو معمول پر لانے کیلئے مصروف عمل ہیں،ترجمان کے مطابق حیسکول پیٹرولیم لمیٹڈ اور گیس اینڈ آئل پاکستان لمیٹڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسرز کو بھی ذاتی طور پر پیش ہونے اور اپنی پوزیشن واضح کرنے کے لئے نوٹسز بھی جاری کردیئے گئے ہیں۔ترجمان نے اس بات کا اعادہ کیا کہ موجودہ بحران کے مختلف پہلوں کی تحقیقات کیلئے وفاقی وزیر کی تشکیل کردہ کمیٹی، محفوظ سٹاک کی قیمتوں کا تعین اور ان کی بحالی سمیت جلد ہی اپنی رپورٹ پیش کرے گی جو امور کو ہموار کرنے اور اس بات کو یقینی بنائے گی کہ آئندہ اس طرح کا بحران کا سامنا نہ ہو۔

پٹرولیم ڈویژن

مزید :

صفحہ اول -