وفاقی حکومت نے خیبرپاس اکنامک کوریڈور کے قیام کی منظوری دے دی

وفاقی حکومت نے خیبرپاس اکنامک کوریڈور کے قیام کی منظوری دے دی
وفاقی حکومت نے خیبرپاس اکنامک کوریڈور کے قیام کی منظوری دے دی

  

پشاور (ویب ڈیسک) وفاقی حکومت نے پشاور سے طورخم سرحد تک خیبرپاس اکنامک کوریڈور کے قیام کی منظوری دے دی۔ یہ منصوبہ 48 کلو میٹر طویل 4 رویہ ایکسپریس وے اورانڈسٹریل زون پر مشتمل ہوگا۔وفاقی وزیر برائے مذہبی امور پیر نور الحق قادری کا کہنا ہے کہ وفاقی حکومت نے پشاور سےطورخم سرحد تک خیبرپاس اکنامک کوریڈورکے قیام کی منظوری دیدی ہے، تعمیر پر 65 ارب روپے لاگت آئیگی۔ عظیم منصوبہ خطہ میں معاشی انقلاب کا پیش خیمہ ثابت ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ منصوبہ 48 کلومیٹر طویل 4 رویہ ایکسپریس وے اورانڈسٹریل زون پر مشتمل ہوگا، منصوبہ ورلڈبینک اور پاکستان کے اشتراک سے مکمل ہوگا، جس سے ایک لاکھ شہریوں کوروزگار کے مواقع ملیں گے، منصوبہ 2024ءمیں مکمل ہو گا۔پیر نور الحق قادری کا کہنا تھا کہ طورخم تا کابل ہائی وے کی تعمیر افغان حکومت کرے گی، منصوبہ جنوبی ایشیاءکو افغانستان کے راستے وسطی ایشیاءسے منسلک کرے گا، سائن آف خیبرپاس اکنامک کوریڈور سے قبائلی اضلاع میں تعمیر وترقی کا نیادور شروع ہوگا۔

وفاقی وزیر برائے مذہبی امور کا مزید کہنا تھا کہ خیبر پاس اکنامک کوریڈور علاقے کی ترقی میں سنگ میل کا کردار ادا کرے گا، منصوبہ قبائلی عوام کی خوشحالی کا ضامن اور پاک افغان تعلقات کیلئے فائدہ مند ہو گا، منصوبہ کا اعلان وزیر اعظم عمران خان نے گزشتہ سال جمرود جلسہ عام میں کیا تھا، وعدے کی تکمیل اور منصوبہ کی منظوری پر قبائلی عوام وزیراعظم کی ممنون ہیں۔

مزید :

علاقائی -خیبرپختون خواہ -پشاور -