زائدالمیعاد اسٹنٹ، 20 سے زائد ڈاکٹروں کیخلاف کارروائی کی سفارش

زائدالمیعاد اسٹنٹ، 20 سے زائد ڈاکٹروں کیخلاف کارروائی کی سفارش

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور (جاوید اقبال)پنجاب انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں زائدالمیعاد اسٹنٹ کی موجودگی پرانکوائری آفیسر کی طرف سے ہسپتال کے پانچ پروفیسرز سمیت 20 سے زائد ڈاکٹروں اور نرسوں کیخلاف کارروائی کی سفارش کاینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن پنجاب نے نوٹس لیا ہے لائحہ عمل کیلئے جنرل کونسل کا اجلاس طلب کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے رہنماؤں کا کہنا ہے کہ انکوائری آفیسر کی تحقیقات حقائق کے منافی ہے کیسے چینج کریں گے۔ وزیراعلی پنجاب اس کا فوری نوٹس لیں اور غلط تحقیقاتی رپورٹ پیش کرنیوالے انکوائری آفیسر کیخلاف کارروائی کی جائے۔ زائدالمعیاد اسٹنٹ کی موجودگی کمپیوٹر کی غلطی ہے۔اس پر ہسپتال کے سابق چیف ایگزیکٹو ایم ایس سمیت دیگر پروفیسر اسسٹنٹ پروفیسر اسسٹنٹ پروفیسر فارماسسٹ نرسوں کو بھاری سزائیں دینا کسی طور پر بھی اخلاقی اور قانونی طور پر جائز نہیں ہے،پروفیسرز کی دو سے تین سال کی ترقی روکنا سروس ضبط کرنا نامناسب ہے،وزیر اعلی پنجاب فوری طور پر نوٹس لیتے ہوئے دوبارہ انکوائری کروائیں۔رہنماؤں نے کہا پورے ہسپتال کو سزا دی گئی ہے جو کہ غیر قانونی ہے اس حوالے سے مرکزی رہنما ڈاکٹر سلمان حسیب سے بات کی گئی تو انہوں نے کہا ہم اس سزا کو چیلنج کریں گے۔انہوں نے کہا غلط ہے تحقیقاتی رپورٹ پر اگر سزائیں دی گئیں تو ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن احتجاج بھی کرے گی اور قانونی راستہ بنائے گی۔
زائدالمیعاد اسٹنٹ 

مزید :

صفحہ آخر -