ڈاکوؤں کا گھر پر دھاوا، لاکھوں روپے نقدی، زیورات لیکر فرار

ڈاکوؤں کا گھر پر دھاوا، لاکھوں روپے نقدی، زیورات لیکر فرار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 بستی ملوک(نمائندہ پاکستان)تھانہ بستی ملوک کے علاقہ اڈا لاڑ کے قریب قصبہ مڑل،چاہ گانموں والا میں دن دہاڑے ڈکیتی کی واردات نا معلوم مسلحہ ڈاکو دیوار پھلانگ کر  محمد رضوان نامی شخص کے گھر میں داخل ہوئے گھر میں کوئی موجود نہ تھا پتہ چلنے پر اہلیان محلہ و گھر مالک رضوان نے شور مچایااسی دوران مسلحہ ڈاکو لوٹ مار کرکے فرار ہونے کی کوشس کررہے تھے کہ ایک ڈاکو کو گھر مالک رضوان نے پیچھے بھاگ کر کھیتوں سے پکڑ لیا جس پر ڈاکو نے تیز دھارآ(بقیہ نمبر26صفحہ6پر)
لہ سے حملہ کردیا تیز دھار آلہ سے رضوان کابازو  زخمی ہوگیا تاہم ملزم کو بھاگنے نہ دیا دیگر ملزمان گھر سے سات لاکھ نقدی،طلائی زیورات مالیت تین لاکھ پچاس ہزار اور گھر کا دیگر قیمتی سامان موبائل فونز وغیرہ لوٹ کر لے گئے 15 پر کال کرنے پر 4 گھنٹے تک پولیس موقع پر نہ پہنچ پائی جس پر لوگوں نے روڈ بلاک کرتے ہوئے پولیس کے خلاف سخت احتجاج کیا تقریبا 4 گھنٹے بعد 2 پولیس اہلکار موٹرسائیکل پر پہنچے تو مشتعل مظاہرین نے ڈکیت کو پولیس کے حوالے کرنے سے انکار کردیا ان کا کہنا تھا کہ تھانہ بستی ملوک کے ایس ایچ او حماد خان سمیت دیگر عملہ کرپٹ ہے پولیس اہلکار پہلے بھی کئی خطرناک گینگز کے ملزمان کو مبینہ بھاری رشوت لے کر چھوڑ چکی ہے۔جب تک ڈی ایس پی موقع پر نہیں آجاتے ہم ملزم پولیس کے حوالے نہیں کریں گے۔ بلاآخر 4 گھنٹے بعد بھی ایس ایچ او سمیت کوئی اعلی پولیس آفیسر موقع پر نہ آیا تو اہلیان علاقہ نے معززین علاقہ کی موجودگی میں ملزم کو پولیس اہلکاروں کے حوالے کردیا جسے ایک کانسٹیبل  وہاں موجود ایک شہری کے ساتھ موٹرسائیکل پر بیٹھا کر تھانے لے گیا۔ معززین علاقہ کا کہنا تھا کہ پولیس اپنا وقار کھو چکی ہے عوام کسی بھی صورت اس کرپٹ عملے پر اعتماد کرنے کوتیار نہیں ہماری آئی جی پنجاب،آر پی او ملتان سے درخواست ہے کہ تھانہ بستی ملوک کا مکمل عملہ تبدیل کیا جائے تاکہ عوام سکون کا سانس لے سکیں۔