ایمازون کے جنگل میں طیارہ تباہ، 13 سالہ لڑکی اپنے 3 چھوٹے بہن بھائیوں کو بچانے میں کامیاب

ایمازون کے جنگل میں طیارہ تباہ، 13 سالہ لڑکی اپنے 3 چھوٹے بہن بھائیوں کو بچانے ...
ایمازون کے جنگل میں طیارہ تباہ، 13 سالہ لڑکی اپنے 3 چھوٹے بہن بھائیوں کو بچانے میں کامیاب
سورس: Columbia Presidency

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

بوگوٹا(مانیٹرنگ ڈیسک)جنوبی امریکہ کے ملک کولمبیا میں ایمازون کے جنگلات میں طیارہ گر کر تباہ ہونے کے بعد ایک 13سالہ لڑکی تن تنہاء اپنے تین چھوٹے بہن بھائیوں کو معجزانہ طور پر زندہ جنگل سے نکالنے میں کامیاب ہو گئی۔ میل آن لائن کے مطابق اس طیارے میں 13سالہ لیزلے اپنی والدہ اور تین چھوٹے بہن بھائیوں کے ساتھ سوار تھی، جن کی عمریں 9سال، 4سال اور ایک سال تھیں۔

بدقسمتی سے یہ چھوٹا طیارے حادثے سے دوچار ہوکر گر گیا۔ معجزانہ طور پر ان چار بچوں کے علاوہ طیارے میں سوار تمام لوگ موت کے منہ میں چلے گئے۔ لیزلے کی دادی نے بتایا ہے کہ ”میری پوتی اپنے تین بہن بھائیوں کو بچانے والی ہیروئن ہے۔ وہ گھر میں اپنے تمام بہن بھائیوں کی دیکھ بھال کرتی تھی اور اسی مہارت کو اس نے جنگل میں اپنے بہن بھائیوں کو زندہ رکھنے کے لیے استعمال کیا۔ 

رپورٹ کے مطابق لیزلے 40دن تک اپنے بہن بھائیوں کے ساتھ جنگل میں رہی اور اس دوران ان کی دیکھ بھال کرتی رہی۔ اس دوران ان کی تلاش کے لیے آپریشن جاری رہا اور بالآخر ریسکیوٹیم انہیں تلاش کرنے میں کامیاب ہو گئی۔بچوں کو زندہ سلامت پا کر آرمی کی ریسکیو ٹیم نے ریڈیو پر ’معجزہ معجزہ معجزہ معجزہ‘ کہہ کر حکام کو اطلاع دی۔یہ آرمی کی طرف سے کوڈ دیا گیا تھا کہ اگر چاروں بچے زندہ مل جائیں تو چار بار لفظ ’معجزہ‘ بولا جائے گا۔رپورٹ کے مطابق چاروں بچے بہت خستہ حالت میں پائے گئے تھے جنہیں فوری طور پر ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں انہیں طبی امداد دی جا رہی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -