گورنرخیبرپختونخواہ کی تقرری سے متعلق وفاق سے جواب طلب ، تقرری کے وقت شوکت اللہ باجوڑ ایجنسی کے ووٹر تھے : ذرائع

گورنرخیبرپختونخواہ کی تقرری سے متعلق وفاق سے جواب طلب ، تقرری کے وقت شوکت ...
گورنرخیبرپختونخواہ کی تقرری سے متعلق وفاق سے جواب طلب ، تقرری کے وقت شوکت اللہ باجوڑ ایجنسی کے ووٹر تھے : ذرائع

  

پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک) خیبرپختونخواہ کے گورنر انجینئر شوکت اللہ کے تقرر کے حوالے سے ہائیکورٹ نے وفاق سے جواب طلب کرلیاہے جبکہ دوسری طرف الیکشن کمیشن کے ذرائع نے تقرری کے وقت گورنر کا ووٹ باجوڑایجنسی کی انتخابی فہرست میں درج ہونے کی تصدیق کردی۔ پشاورہائیکورٹ میں گورنر کے تقرر کے حوالے سے دائر درخواست کی سماعت ہوئی ۔دوران سماعت درخواست گزار نے موقف اختیار کیاکہ اٹھارہویں کے بعد صوبے کا ووٹر ہی صرف گورنر بن سکتاہے ۔ عدالت نے گورنر کے ووٹ سے متعلق وفاق سے جواب طلب کرلیاہے ۔منگل کو ہی گورنر خیبر پختون خوا انجینئر شوکت اللہ خان نے اپنا ووٹ پشاور کے علاقے محال ترائی میں رجسٹر کرادیا ہے۔آئین کے آرٹیکل 101کے تحت گورنر کے لئے لازمی ہے کہ اسکا ووٹ صوبے کے کسی حلقے میں درج ہوتاہم گورنر کے عہدے پر تعیناتی کے وقت انجینئر شوکت اللہ خان کا ووٹ باجوڑ ایجنسی کی انتخابی فہرست میں درج تھا۔آئین کی آرٹیکل 101 کو بنیاد بناتے ہوئے گورنر خیبر پختون خوا کی تعیناتی کو پشاور ہائی کورٹ میں چیلنج کیاگیا تھا۔جیونیوز کے مطابق آئینی تنازعے سے جان چھڑانے کے لئے گورنر خیبر پختون خوا نے اپنا ووٹ پشاور میں درج کروادیا ہے۔

مزید :

پشاور -